باپ کے گھر کی مرمت کرتے نوجوان کو ایک کمرے میں 40 برس سے پڑی ایسی خوفناک چیز آگئی کہ دیکھ کر پیروں تلے زمین ہی نکل گئی، کبھی سوچ بھی نہ سکتا تھا کہ۔۔۔

باپ کے گھر کی مرمت کرتے نوجوان کو ایک کمرے میں 40 برس سے پڑی ایسی خوفناک چیز ...
باپ کے گھر کی مرمت کرتے نوجوان کو ایک کمرے میں 40 برس سے پڑی ایسی خوفناک چیز آگئی کہ دیکھ کر پیروں تلے زمین ہی نکل گئی، کبھی سوچ بھی نہ سکتا تھا کہ۔۔۔

  

برلن(مانیٹرنگ ڈیسک) جرمنی میں 40سال قبل لاپتہ ہونے والی خاتون کی لاش اتنے طویل عرصے بعدایک نوجوان کو اپنے باپ کے گھر کی مرمت کروانے کے دوران مل گئی۔ برطانوی اخبار دی انڈیپنڈنٹ کی رپورٹ کے مطابق یہ واقعہ جرمنی کے شہر کلوپین برگ میں پیش آیا ہے جہاں ایک شخص اپنے والد کے گھر کی تزئین اور تعمیرو مرمت کر رہا تھا۔ اس دوران گھر کے بالائی کمرے میں اس نے خاتون کا ڈھانچہ دیکھ کر پولیس کو اطلاع کر دی۔ پولیس نے آ کر دیکھا تو ڈھانچہ پتوں اور گھاس پھوس سے ڈھکا ہوا تھا۔ گھر کا یہ بالائی کمرہ نصف صدی سے بند پڑا تھا اور کاٹھ کباڑ اور گھاس پھوس سے اٹا ہوا تھا۔ جب کی تزئین کے لیے بلائے گئے شخص نے یہ چیزیں ہٹائیں تو اسے نیچے خاتون کا ڈھانچہ نظر آ گیا۔

ہنی مون سے واپسی پر ائیرپورٹ پر دلہن اپنا موبائل فون شوہر کو پکڑا کر واش روم گئی اور پھر کبھی واپس نہ آئی، کہاں غائب ہوگئی؟ حقیقت سامنے آئی تو دولہا کو زندگی کا سب سے بڑا جھٹکا لگ گیا

پولیس کے مطابق اس خاتون نے کئی جیکٹس اور دو ٹراﺅزر پہن رکھے تھے۔ ڈھانچے کے پوسٹ مارٹم اور دانتوں کے تجزئیے کے بعد حکام اس نتیجے پر پہنچے ہیں کہ یہ اسی 27سالہ خاتون کا ڈھانچہ ہے جو 1977ءمیں اپنے گھر سے 5کلومیٹر کے فاصلے پر لاپتہ ہو گئی تھی اور اس کی گمشدگی کی رپورٹ پولیس کو درج کروائی گئی تھی۔ حکام کا کہنا ہے کہ ”یہ خاتون 1976ءمیں بھی ایک بار لاپتہ ہوئی تھی اور اسے 6ہفتے بعد جنگل سے تلاش کیا گیا تھا۔ اس کے بعد اگلے سال یہ پھر لاپتہ ہو گئی اور اب اس کا ڈھانچہ دریافت ہوا ہے۔ یہ خاتون تین بچوں کی ماں تھی اور ذہنی مریض تھی۔ اس کے شوہر کا 2012ءمیں انتقال ہو چکا ہے۔“

مزید :

ڈیلی بائیٹس -