ستمبر اور اکتوبر کپاس کی فصل کے لیے انتہائی اہم ہیں، ڈاکٹر صغیر احمد

ستمبر اور اکتوبر کپاس کی فصل کے لیے انتہائی اہم ہیں، ڈاکٹر صغیر احمد

  

فیصل آباد (آن لائن)ایوب زرعی تحقیقاتی ادارہ فیصل آباد کے ڈائریکٹر کاٹن ڈاکٹر صغیر احمد نے کاشتکاروں کو آگاہ کیا ہے کہ ستمبر اور اکتوبر کپاس کی فصل کے لیے انتہائی اہم ہیں کیونکہ رس چوسنے والے کیڑوں ، چست تیلہ ، سفید مکھی اور تھرپس کے علاوہ لشکری اور گلابی سنڈی کی افزئش نسل میں اضافہ ہوجاتا ہے ۔ محکمہ زراعت پنجاب کی حالیہ پیسٹ سکاوٹنگ کی رپورٹ کے مطابق تھرپس ، ملی بگ، لشکری اور گلابی سنڈی کے علاوہ کپاس کی پتا مروڑ وائرس کے حملہ میں نسبتاً اضافہ ہوا ہے۔

انہوں نے مزید کہا کہ کپاس کی گلابی سنڈی نہایت خطرناک کیڑا ہے جو نئے شگوفوں اور ڈوڈیوں پر حملہ آور ہو کر پھول کے نر اور مادہ حصوں کو کھاتی ہے اور اس سنڈی کے حملہ سے متاثرہ ٹینڈے بمشکل کھلتے ہیں اور ان سے حاصل ہونے والی روئی کا ریشہ کمزور اور بدرنگ ہوتا ہے انہوں نے کاشتکاروں کو ہدایت کی ہے کہ وہ کپاس کی گلابی سنڈی کے موثر تدارک کے لیے مدھانی نما پھول ، متاثر ڈیوڈیاں اور ٹینڈے توڑ کر تلف کریں اور جنسی پھندے لگائیں۔رس چوسنے والے کیڑوں اور گلابی سنڈی کے کیمیائی انسداد کے لیے نئی کیمسٹری کی حامل زہروں کا سپرے کریں اور ایک گروپ کی زہروں کا بار بار سپرے نہ کریں۔۔#/s#

مزید :

کامرس -