گلوکارہ حمیرا ارشد کے سابق شوہر کو بچہ عدالت میں لے کر پیش ہونیکا حکم

گلوکارہ حمیرا ارشد کے سابق شوہر کو بچہ عدالت میں لے کر پیش ہونیکا حکم

  

لاہور(نامہ نگار )ایڈیشنل سیشن جج غلام عباس سیال نے گلوکارہ حمیراارشد کے بچے کے حصول کے لئے دائر درخواست پر اس کے سابق شوہر کو آج7ستمبر تک بچہ پیش کرنے کی مہلت دے دی ،عدالت میں گزشتہ روزحمیرا رشد کا سابق شوہر احمد بٹ بچہ لے کرپیش نہیں ہوا جس پرعدالت نے ہرحال میں اسے بچہ سمیت عدالت میں پیش ہونے کا حکم دے دیا ہے ۔ایڈیشنل سیشن جج نے حمیرا ارشد کی طرف سے بچے کے حصول کے لئے دائر درخوست پر فیصلہ سنانا تھا تاہم عدالت میں حمیرا ارشد موجود تھیں لیکن ان کا سابق شوہراحمد بٹ بچہ لے کر پیش نہیں ہوا جبکہ احمد بٹ کی طرف سے ان کے وکیل پیش ہوئے جنہوں نے عدالت کو بتایا کہ بچے کو سیکورٹی کی وجہ سے پیش نہیں کیا گیا ، 7ستمبر کو بچے کو پیش کردیا جائے گا،دوسری جانب حمیراارشد کے وکیل نے اعتراض اٹھایا کہ فیصلے کے وقت وکیل کا ہونا ضروری نہیں ہوتا ،جان بوجھ کر کیس کو التوا میں ڈالنے کی کوشش جارہی ہے،اس پرعدالت نے دونوں وکلاء کی رضا مندی سے سماعت 7ستمبر2 بجے تک ملتوی کردی ہے ۔ سماعت کے بعد حمیرا ارشد نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ احمد بٹ جان بوجھ کر ایشو پیدا کر رہے ہیں ،سکیورٹی کی ان کو نہیں بلکہ مجھے ضرورت ہے۔

مزید :

صفحہ آخر -