ترقیاتی منصوبوں پر کام بندش کی وجہ سے رقم ضائع ہونے کا خدشہ

ترقیاتی منصوبوں پر کام بندش کی وجہ سے رقم ضائع ہونے کا خدشہ

  

بٹ خیلہ(بیورورپورٹ)تحصیل بٹ خیلہ میں ایک ارب45کروڑروپے کے ترقیاتی کاموں پرکام کی بندش ہونے کی وجہ سے حکومت کی بھاری رقم ضائع ہونے کاخدشہ صوبائی حکومت فوری نوٹس لیکرعوام کوسہولیات فراہم کی جائیں ۔تفصیلات کے مطابق سابقہ دورحکومت میں عوام کی سہولت کے لئے ڈسٹرکٹ ہیڈکوارٹرہسپتال بٹ خیلہ میں جدیدسہولیات سے اراستہ ہسپتال بلڈنگ کوتعمیر کرنے کیلئے 63کروڑروپے بٹ خیلہ کوصاف پانی کی فراہمی کیلئے بھی 63کروڑروپے حنیف خان میموریل ہال کی تعمیر کیلئے 8کروڑروپے اورتھانہ بھائی پاس سے مالاکنڈیونیورسٹی تک بائی پاس کیلئے 14کروڑروپے کی لاگت سے کام شروع کیاتھا مگر6سالوں سے زیادہ عرصہ گزرنے کے باوجود مذکورہ منصوبے مکمل نہ ہوسکی جس کی وجہ سے حکومت کے ایک ارب روپے سے زیادہ رقم ڈوب ہونے کاخدشہ ہیں مالاکنڈکے عوامی حلقوں نے تبدیلی کے دعویدارصوبائی حکومت سے مطالبہ کیاہے کہ وہ فوری طورپربٹ خیلہ ہسپتال حنیف خان میموریل ہال بٹ خیلہ گریوٹی سکیم اورتھانہ بائی پاس سے مالاکنڈیونیورسٹی تک روڈ پرکام شروع کرکے لوگوں کواس مشکلات سے نجات دلاکرحکومت کے اربوں روپے ضائع ہونے سے بچایاجائے۔

مزید :

کراچی صفحہ اول -