عدالتی احکامات کی تعمیل نہ کرنے پر وزیر اعلٰی ،ڈی سی نو شہرہ اور ضلع ناظم کو نوٹس

عدالتی احکامات کی تعمیل نہ کرنے پر وزیر اعلٰی ،ڈی سی نو شہرہ اور ضلع ناظم کو ...

  

پشاور(نیوزرپورٹر)پشاورہائی کورٹ کے جسٹس یحیی آفریدی اور جسٹس اشتیاق ابراہیم پرمشتمل دورکنی بنچ نے عدالتی احکامات کی تعمیل نہ کرنے پر خیبرپختونخوا کے وزیراعلی پرویزخٹک ٗ ڈپٹی کمشنرنوشہرہ افتخارعالم اورضلع ناظم نوشہرہ لیاقت علی خٹک کوتوہین عدالت کانوٹس جاری کردیاہے فاضل بنچ نے یہ احکامات گذشتہ روز پشاوریونیورسٹی کے سنڈیکیٹ کی جانب سے میاں محب اللہ کاکاخیل اورسیف محب اللہ کاکاخیل ایڈوکیٹس کی وساطت سے دائرتوہین عدالت کی درخواست پر جاری کئے اس موقع پرعدالت کو بتایاگیاکہ اضاخیل میں واقع اراضی پشاوریونیورسٹی کو بین الاقوامی معیارکابوٹینکل گارڈن کے قیام کے لئے الاٹ کی گئی تھی تاہم بعدازاں مذکورہ اراضی کے کچھ حصے پر خیبرپختونخواحکومت نے ائریونیورسٹی اورٹیکنیکل یونیورسٹی قائم کرنے کافیصلہ کیاجس کے خلاف پشاوریونیورسٹی ٹیچرزایسوسی ایشن نے پشاورہائی کورٹ میں رٹ دائرکی اورعدالت عالیہ کے دورکنی بنچ نے خیبرپختونخواحکومت کے فیصلے کو کالعدم قرار دے دیاتھا جس کے خلاف صوبائی حکومت نے سپریم کورٹ آف پاکستان میں اپیل دائرکی تاہم بعدازاں حکومت نے اپیل واپس لے لی تھی اوراس تناظرمیں پشاورہائی کورٹ کافیصلہ بحال ہوگیا تھا لیکن نوشہرہ کی ضلعی انتظامیہ نے ایک بارپھربوٹینکل گارڈن کو سربمہرکردیاتھااورعدالت عالیہ نے سربمہری ختم کرنے کے احکامات جاری کئے لیکن عدالتی احکامات کے باوجود سربمہری ختم نہیں کی گئی جو توہین عدالت کے زمرے میں آتاہے لہذامتعلقہ حکام کے خلاف توہین عدالت کی کاروائی کی جائے فاضل بنچ نے ابتدائی دلائل کے بعد وزیراعلی خیبرپختونخواپرویزخٹک ٗ ضلع ناظم نوشہرہ لیاقت علی خٹک اورڈپٹی کمشنرنوشہرہ افتخارعالم کو توہین عدالت کانوٹس جاری کردیاہے ۔

مزید :

کراچی صفحہ اول -