مٹہ ،میاں کلی میں وبائی مرض سے 2 خواتین جاں بحق

مٹہ ،میاں کلی میں وبائی مرض سے 2 خواتین جاں بحق

  

مٹہ(نمائندہ پاکستان ) مٹہ علاقہ ارکوٹ میاں کلی میں وبائی مرض سے 2خواتین جاں بحق تفصیلات کیمطابق مٹہ کے یوسی ارکوٹ کے گاؤں میاں کلی میں وبائی مرض نے تہلکہ مچا رکھا ہیں علاقہ عمائدین کے مطابق ابھی تک اس وبائی مرض سے دو خواتین جانبحق ہوگئی ہیں،جبکہ اسے گھرانے اور اس کے اس پاس کے گھروں میں بھی بچے اور خواتین اورمرد بیمار ہیں،اس سلسلے میں گاوں کے مشران نے میڈیا سے گفتگو کر تے ہوئے کہا کہ حکومت خصوصی ٹیمیں تشکیل دیکر غریب عوام کے حالات زار پر رحم کریں ،جبکہ اس اثنا ڈی ایچ او سوات کے خصو صی ہدایت پر مٹہ ہسپتال کے خصو صی ٹیم جسمیں چلڈرن سپیشلسٹ ،میڈیکل سپیشلسٹ اور دیگر عملہ زیر نگرانی سرجن ڈاکٹر عبدالوکیل نے علاقے کا دورہ کیا اور دیگر افراد کا بھی معائینہ کیا ،جبکہ مریضوں سے خون بھی لئے گئے تاکہ ٹیسٹ سے واضح پتہ چل سکے کے بیماری اصل میں ہے کیا اس دوران سرجن ڈاکٹر عبدالوکیل نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ یہ یرقان اور ملیریا ہیں جب یہ دونوں مل جاتے ہے تو بیماری خطرناک ہوجاتی ہیں لیکن فی الحال یہاں پر کو خطرہے سے دو چار نہیں جبکہ ان لوگوں احتیاظی تدابیر کیلئے ہدایات دی گئی ہیں ،جسمیں وہاں موجود پانی کاتالاب ،اسی طرح دیگر گندگی اصل میں اس بیماریوں کا سبب بنا ،جسمیں ہم نے ابھی بھی سبرے کیا ،جبکہ کل بھی یہاں پر ملیریا سپرے کیا جائیگا۔ میڈیا کے سامنے ان مریضوں کو دیکھا یا گیا جس میں ولید، نوید، نیاز علی، سودیس، سجاد ، زوبیدہ، بے نظرہ، شازیہ، شامہ، بلانشتہ،فتح خان، گلہ، حمیدخان، سرتاج، افسر، امجد، نوشاد ، جہان شیر بھی اس طرح کے مریض میں مبتلا ہیں۔ جبکہ جانبحق ہونے والے خواتین میں ریاست بی بی، شیر بانو شامل ہیں۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -