شبقدر میں تاجروں کا ٹیکسوں میں اضافہ کیخلاف احتجاجی مظاہرہ

شبقدر میں تاجروں کا ٹیکسوں میں اضافہ کیخلاف احتجاجی مظاہرہ

  

شبقدر (نمائندہ خصوصی ) شبقدر انجمن تاجران کا سالانہ ٹیکسوں میں اضافے کے خلاف شبقدر چوک میں احتجاجی مظاہرہ ناجائز اور ظالمانہ ٹیکس کسی صورت قبول نہیں شبقدر ٹی ایم اے مختلف قسم کے غیرقانونی ٹیکسز اپنے ذاتی مقاصد کے لئے وصول کر رہی ہے تہہ بازاری ٹیکس میں لاکھوں روپے ہڑپ کئے جا رہے ہیں ۔ تفصیلات کے مطابق شبقدر بازار میں مقامی ٹی ایم اے انتظامیہ کی جانب سے دکانوں کے سالانہ ٹیکس میں اضافہ کے خلاف انجمن تاجران شبقدر کے عہدیداروں نے باچہ خان چوک میں احتجاجی مظاہرہ کیا مظاہرہ سے خطاب کرتے ہوئے صدر نور احمد مہمند ۔نائب صدر قلندر خان ۔خیال زادہ عرف سیٹھ ۔فرید خان ۔ادریس خان حاجی سکندر خان ۔طارق زیب ۔جہانگیر امیر صاحب اور فخرعالم نے کہا کہ شبقدر ٹی ایم اے کی جانب سے مختلف مدمیں شبقدر بازار کے تاجروں سے ٹیکس وصول کئے جاتے ہیں مگر اس کے برعکس شبقدر بازار کے تاجروں کو کوئی سہولیات میسر نہیں انہوں نے کہا کہ ٹی ایم اے شبقدر میں درجنوں گھوسٹ ملازمین ہیں جس کو تنخواہیں سرکاری خزانے سے ملتی ہے اور صرف تنخواہوں کے دن آتے ہیں انہوں نے مزید کہا کہ شبقدر بازار میں عرصہ دراز سے سٹریٹ لائٹس موجود نہیں ہے جبکہ صفائی کے ابتر صورت حال کے باعث شبقدر بازار میں مختلف بیماریاں پھیل رہی ہے انہوں نے کہا کہ شبقدر بازار میں تہہ بازاری ٹیکس کے نام پر ہزاروں غیر رجسٹرڈ ہتھ ریڑھیوں اور چھابڑی فروشوں سے ماہانہ لاکھوں روپے ٹیکس وصول کیا جاتا ہے جس کا ایک چوتھائی حصہ قومی خزانے میں جمع ہوتا ہے جبکہ باقی ملازمین کے جیبوں میں چلا جاتا ہے انہوں نے وزیر بلدیات اورمتعلقہ اداروں سے مقامی ٹی ایم اے انتظامیہ کے گھپلوں کا فوری نوٹس لیں اور شبقدر بازار میں ان غیر قانونی ٹیکس کو فوری طور پر بند کیا جائے انہوں نے ڈی ایس پی شبقدر سے مطالبہ کرتے ہوئے کہا شبقدر بازار میں ڈیوٹی پر معمور پولیس اہلکار زاہد اور شعیب کو فوری طور پر یہاں سے ٹرانسفر کرائے مظاہرین نے کہا کہ اگر شبقدر بازار میں غیر قانونی ٹیکسوں کا خاتمہ اور دکانداروں کو تمام تر سہولیات فراہم نہ کی گئی تو شبقدر بازار کے تاجر اپنے مطالبات کے حق میں وزیر اعلی ہاوس کے سامنے مظاہرہ کرنے پر مجبور ہو جائیں گے

مزید :

پشاورصفحہ آخر -