توانائی کا بحران برقرار ،بجلی کی طویل لوڈ شیڈنگ جاری ،صارفین پر اوور بلنگ کا کلہاڑا بھی چلنے لگا

توانائی کا بحران برقرار ،بجلی کی طویل لوڈ شیڈنگ جاری ،صارفین پر اوور بلنگ کا ...

  

ملتان، وہاڑی، کوٹ ادو، رحیم یار خان، رنگ پور (سٹاف رپورٹر، نمائندگان) ملتان سمیت جنوبی پنجاب کے متام بڑے اور چھوٹے شہروں میں توانائی کا بحران اپنی پوری شدت کیساتھ موجود ہے۔ جس کے باعث بجلی کی طویل اور غیر اعلانیہ لوڈشیڈنگ میں کسی قسم کی کمی نہیں آسکی۔ ملتان سے سٹاف رپورٹر کے مطابق ملتان سمیت میپکو ریجن میں بجلی کی طویل لوڈشیڈنگ کا سلسلہ جاری ہے‘ گزشتہ روز بھی 18گھنٹے تک بجلی بند کی گئی ‘اوپر سے ٹرپنگ اور وولٹیج کی کمی نے (بقیہ نمبر39صفحہ7پر )

صورتحال بدترین کر دی جس کے باعث صارفین کو اذیت ہوئی ‘مختلف علاقوں میں عوام نے حکومت کے خلاف احتجاجی مظاہرے کئے ۔ ملتان سمیت میپکو ریجن میں شٹ ڈاؤن‘ بریک ڈاؤن ‘ شیڈول سے زائد لوڈشیڈنگ سے صارفین عذاب میں آگئے ہیں‘ تاجروں کو کاروباری اوقات میں ساڑھے8بجے سے ساڑھے10بجے تک بجلی کی بندش سے نقصانات کا سامنا ہے۔میپکو کے راشد روڈ فیڈر سے گزشتہ روز طویل شٹ ڈاؤن ہوا ‘معمول کی لوڈشیڈنگ کے علاوہ دن ساڑھے12بجے بجلی بند ہو ئی جو کئی گھنٹوں کے بعد رات کو بحال ہوئی جس کے باعث صارفین کو شدید مشکلات کا سامنا کرنا پڑا۔ وہاڑ ی سے بیورو رپورٹ اور نامہ نگار کے مطابق وہاڑی سے بیورو رپوٹ+نا مہ نگار کے مطابق بجلی کی لوڈشیڈنگ کی وجہ سے ہر طبقہ پریشان ہے جس سے مریض ، بچے ، بوڑھے اور خواتین کی مشکلات بڑھنے لگی ہیں اور تاجر طبقہ کے کاروبار بھی بری طرح متا ثر ہو رہے ہیں اور بجلی سے منسلک کاریگروں کے گھروں کے چولہے ٹھنڈے پڑنے لگے جس پر عوامی وسماجی اور شہر ی حلقوں ایم شفیق ، اکرم علی ، محمد شہباز ، عبدالمجید، وسیم علی ، حسنین مجید، عبدالرحمان ودیگر نے احتجاج کرتے ہوئے حکومت سے بجلی کی لودشیڈنگ کے خاتمہ کا مطالبہ کیا ہے تاکہ عوام کوریلیف مل سکے ۔ کوٹ ادو سے تحصیل رپورٹر کے مطابق واپڈا سرکل کوٹ ادو کے میٹر ریڈروں نے اوور بلنگ کا سلسلہ تیز کر دیا ہے،زائد یونٹ ڈال کر شہریوں کو بھاری بجلی کے بل بھیجنا معمول بن گیا ہے ،اسی حوالے سے خان چوک میں قائم جامع مسجد کے متولی عبدالطیف نے بتایاکہ مذکورہ مسجد کا ہر ماہ 4سو روپے سے زیادہ بجلی کا بل نہیں آتا تھا اس بار واپڈا نے 19ہزار ایک سو 43روپے کا بل بھیج دیا جس سے وہ شدید پریشانی میں مبتلا ہیں جبکہ چک نمبر250ٹی ڈی اے کے محبوب علی نے پریس کلب کوٹ ادو میں صحافیوں کو بتایاکہ اس کے گھر کا بل 2سو روپے سے زائد کبھی نہیں آیا جبکہ اس بار میٹر ریڈروں نے زائد یونٹ ڈال دیے جس پر انہیں43سو روپے کا بل بھیج دیا گیاموضع چوہدری کوٹ ادو کے محمد اختر نے بتایاکہ اس کے گھریلو بجلی کے میٹر کا بل ایک سو روپے تک ہر ماہ آتاتھا اس بار واپڈا نے کمال کرتے ہوئے انہیں5ہزار سے زائد کا بجلی کا بل بھیج دیا،صارفین نے میٹر ریڈروں اور واپڈا اہلکاروں کے خلاف شدید احتجاج کرتے ہوئے ایس ای واپڈ کو فوری نوٹس لینے اور زائد یونٹ ڈالنے والے میٹر ریڈروں کے خلاف ایکشن لینے کا مطالبہ کیا ہے۔ رحیم یار خان سے ڈسٹرکٹ رپورٹر کے مطابق رحیم یار خان اور اس کے گردونواح میں بجلی کی کئی گھنٹوں غیر اعلانیہ لوڈ شیڈنگ کا سلسلہ جاری ہے۔ جس کی وجہ سے درزیوں کو عید کی تیاریوں میں مشکلات کا سامنا ہے۔ مختلف درزیوں نے ’’روزنامہ پاکستان‘‘ سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ ارباب اقتدار ہمارے کاروبار کو تباہ کرنے پر تلے ہوئے ہیں کپڑوں کی سلائی میں شدید پریشانی کا سامنا ہے ہمارے کسٹمر مایوس واپس لوٹ رہے ہیں، حکومت ہمارے کاروبار کو وسعت دینے کی بجائے ہمیں بے روگار کرنے پر تلی ہوئی ہے ہم اعلی حکام سے مطالبہ کرتے ہیں کہ لوڈ شیڈنگ پر فوری قابو پایا جائے تاکہ ہم اپنے بچوں کا مستقبل بہتر بنا سکیں۔رنگ پور سے نامہ نگار کے مطابق رنگ پور اور گردونواح کے علاقوں میں میپکو حکام کی غیر علانیہ لوڈ شیڈنگ کا سلسلہ بدستور جاری ہے جس سے کاروبارزندگی ٹھپ ہو کر رہ گیا ہے جس پر عوامی سماجی حلقوں نے میپکو حکام کے خلاف حتجاج کرتے ہوئے غیر علاینہ لوڈشیڈنگ کا سلسلہ ختم کرنے کا مطالبہ کیا ہے۔

لوڈشیڈنگ

مزید :

ملتان صفحہ آخر -