مصری شاہ پولیس نے گھر میں داخل ہوکر دونوں بازو توڑ دیئے ،مضروب رکشہ ڈرائیور انصاف کے لئے عدالت پہنچ گیا

مصری شاہ پولیس نے گھر میں داخل ہوکر دونوں بازو توڑ دیئے ،مضروب رکشہ ڈرائیور ...
مصری شاہ پولیس نے گھر میں داخل ہوکر دونوں بازو توڑ دیئے ،مضروب رکشہ ڈرائیور انصاف کے لئے عدالت پہنچ گیا

  

لاہور(نامہ نگار)مصری شاہ پولیس کی جانب سے گھر میں داخل ہو کراس کے دونوں بازو توڑنے اور اہل خانہ پر تشدد کے خلاف محنت کش رکشہ ڈرائیورانصاف کے لئے سیشن عدالت پہنچ گیا،متاثرہ شخص کی جانب سے پولیس اہلکاروں کے خلاف اندراج مقدمے کی درخواست دائر کی گئی ہے ۔

ایڈیشنل سیشن جج اشفاق احمد کی عدالت میں مصری شاہ کے رکشہ ڈرائیور ظہیرمسیح نے اپنے وکیل کی وساطت سے تھانہ مصری شاہ کے اہلکاروں کے خلاف اندراج مقدمے کی درخواست دائر کرتے ہوئے موقف اختیار کیا ہے کہ پولیس اہلکارچادراور چار دیواری کا تقدس پامال کرتے ہوئے گھر داخل ہوئے، اس پر تشدد کیا اور اس کے دونوں بازو توڑ دیئے،جب اہل خانہ نے احتجاج کیا تو انہیں بھی تشدد کا نشانہ بنایا۔ عدالت کو بتایا گیا کہ پولیس اہلکار اسے منشیات کے دھندے کا اعتراف کرنے پر مجبور کرتے رہے۔عدالت سے استدعا ہے اے ایس آئی عمران شاہ سمیت تین کانسٹیبلوں کے خلاف مقدمہ درج کرنے کا حکم دیا جائے۔ عدالت نے درخواست پر تھانہ مصری شاہ پولیس سے جمعرات کے روز رپورٹ طلب کرلی ہے۔

مزید :

جرم و انصاف -