آئین میں ترمیم کے لیے مسلم لیگ (ن) کا کبھی ساتھ نہیں دینگے،مخدوم سید احمد

آئین میں ترمیم کے لیے مسلم لیگ (ن) کا کبھی ساتھ نہیں دینگے،مخدوم سید احمد

لاہور( نمائندہ خصوصی) مسلم لیگ (ن) نے عدالتی فیصلہ تسلیم نہ کرنے کے لیے جو راستہ اپنایا ہے وہ قطعاً درست نہیں انہوں نے کہا کہ پیپلز پارٹی نے ہمیشہ اصولوں کی سیاست کی ہے۔ آئین میں ترمیم کے لیے مسلم لیگ (ن) کا کبھی ساتھ نہیں دیگی۔پاکستان پیپلز پارٹی جنوبی پنجاب کے صدر و سابق گورنر پنجاب مخدوم سید احمدمحمود نے کہا کہ تین بار وزیر اعظم بننے والے نواز شریف کو عدلیہ نے نا اہل قرار دیا ہے ان کے خلاف کسی سیاسی جماعت نے سازش نہیں کی انکی ریلی اداروں کے خلاف تھی جس پر 40 سے 50 کروڑ روپے خرچ ہوئے قوم جاننا چاہتی ہے کہ یہ رقم کہاں سے آئی یہ بات انہوں نے اپنی رہائش گاہ پر پارٹی رہنماؤں کے ایک وفد سے ملاقات کے دوران گفتگو کرتے ہوئے کہی جبکہ اس موقع پر پارٹی کی فیڈرل کونسل و منشور کمیٹی کے رکن عبدالقادر شاہین ، جنوبی پنجاب کے سیکرٹری اطلاعات شوکت محمود بسراء اور میڈیا کوارڈینٹر محمد سلیم مغل بھی موجود تھے۔ انہوں نے کہا کہ مسلم لیگ (ن) نے عدالتی فیصلہ تسلیم نہ کرنے کے لیے جو راستہ اپنایا ہے وہ قطعاً درست نہیں ۔ آئین کے تحت عدلیہ فوج پر کوئی بات نہیں کی جا سکتی لیکن پھر بھی نوا ز شریف، خواجہ سعد رفیق، خواجہ آصف، اسحاق ڈار، دانیال عزیز، طلال چوہدری اور رانا ثناء اللہ نے دونوں اداروں کو تنقید کا نشانہ بنایا جو توہین عدالت اور غداری کے زمرے میں آتا ہے۔ انہوں نے کہا کہ نواز شریف کی نا اہلی کے بعد اب حکومت حد سے تجاوزکرنے کی کوشش میں ہے۔ جو اپنے ذاتی مفادات کے حصول اور اس کے تحفظ کے لیے اس کے پیچھے پڑ گئی ہے۔ انہوں نے کہا کہ پیپلز پارٹی نے ہمیشہ اصولوں کی سیاست کی ہے اور آئندہ بھی کرتی رہے گی۔ آئین میں ترمیم کے لیے مسلم لیگ (ن) کا کبھی ساتھ نہیں دیگی

مزید : میٹروپولیٹن 1