پاک فوج نے کئی بار جذبہ ایمانی اور قوم کی حمایت سے دشمن کو دھول چٹائی، نظریہ پاکستان ٹرسٹ 

  پاک فوج نے کئی بار جذبہ ایمانی اور قوم کی حمایت سے دشمن کو دھول چٹائی، ...

  

 لاہور(جنرل رپورٹر)جنگ ستمبر1965ء کے دوران پاکستان کی مسلح افواج اور پوری قوم نے یکجان ہو کر اپنے سے کئی گنا بڑے دشمن کو خاک چاٹنے پر مجبور کر دیا،ہمارا جذبہئ ایمانی اور باہمی اتحاد دشمن کیخلاف ہمارے سب سے موثر ہتھیار ہیں، پاکستانی فوج کا شمار دنیا کی بہترین پیشہ ورانہ افواج میں ہوتا ہے اور ہمیں اپنی بہادر افواج پر فخر ہے۔ ان خیالات کااظہار مقررین نے ”یوم دفاع“ کے موقع پرنظریہئ پاکستان ٹرسٹ کے زیر اہتمام خصوصی نشت میں کیا۔چیئرمین تحریک پاکستان ورکرز ٹرسٹ چیف جسٹس (ر) میاں محبوب احمد نے کہا کہ آج کا دن ہمیں یہ یاد دلاتا ہے کہ قومی یکجہتی و اتحاد ہی دنیا کی سب سے بڑی قوت ہے اور اتحاد و اتفاق کی بدولت ہی قومیں سربلند اور کامیابیاں حاصل کرتی ہیں۔ ستمبر 1965ء کی جنگ میں پاک فوج نے پوری قوم کی مدد سے بھارت کو شکست سے دوچار کیا۔ وائس چیئرمین نظریہئ پاکستان ٹرسٹ میاں فاروق الطاف نے کہا کہ 6ستمبر 1965ء ہماری قومی تاریخ کا قابل فخر دن ہے۔ اس دن پاکستان کی بہادر افواج اور عوام اپنے سے کئی گنا بڑے دشمن کے سامنے سیسہ پلائی دیوار بن گئے تھے۔سینیٹر لیفٹیننٹ جنرل(ر) عبدالقیوم نے کہا کہ ستمبر 1965ء میں بھارت نے پاکستان پر یہ سوچ کر حملہ کردیا کہ وہ اسے نیست ونابود کردیں گے۔اس کا یہ خواب نہ اس وقت شرمندہئ تعبیر ہوا اور نہ کبھی آئندہ ہو گا۔ جنگ ستمبر 1965ء کے غازی ایئر وائس مارشل (ر) عمر فاروق نے کہا کہ 1965ء کی جنگ کے دوران میں 24سال کا نوجوان پائلٹ تھا۔اس وقت پوری قوم دفاع وطن کیلئے متحد ہو گئی۔ نئی نسل دفاع پاکستان کیلئے جینے اور مرنے کا عزم کرے۔ جنگ ستمبر 1965ء کے غازی بریگیڈیئر (ر) حامد سعید اختر نے کہا ہمیں اپنی شاندار روایات پر فخر کرنا اور ان کو نئی نسلوں تک پہنچانا چاہئے۔ جنگ ستمبر1965ء میں قدم قدم پر غیبی مدد ہمارے شامل حال رہی۔ ناقابل تسخیر جذبے رکھنے والی اس قوم کو کوئی شکست نہیں د ے سکتا ہے۔ جنگ ستمبر 1965ء کے غازی کرنل (ر) عبدالرؤف مگسی نے کہا کہ بھارت نے ہم پر متعدد جنگیں مسلط کیں۔ جنگ ستمبر 1965ء میں بھی اس نے پاکستان پر حملہ کر دیا لیکن پاک افواج نے عوامِ پاکستان کی مدد اور نصرت الٰہی کی بدولت دشمن کو شکست دی۔ جنگیں جذبوں سے لڑی جاتی ہیں، موت کی طرف لپکنے والوں سے موت بھی ڈرتی ہے۔جنگ ستمبر 1965ء کے غازی کرنل(ر) محمد شہباز نے کہا کہ میں اس جنگ میں شریک تھا۔1965ء میں قوم کے اندر ایک ہی جذبہ تھا کہ وطن پر قربان ہو جائیں۔جنگ کے دوران شہریوں میں خوف وہراس کی کوئی کیفیت نہیں تھی۔ بیگم مہناز رفیع نے کہا کہ جنگ ستمبر 1965ء کے دوران پاک فوج اور پوری قوم یکجا تھی۔شاہد رشید نے کہا پاکستانی فوج کا شمار دنیا کی بہترین پیشہ ورانہ افواج میں ہوتا ہے۔ ہمیں اپنی بہادر افواج پر فخر ہے۔

نظریہئ پاکستان ٹرسٹ 

مزید :

صفحہ آخر -