اسلام آبادہائیکورٹ نے سنتھیارچی کو آئندہ سماعت تک ملک بدر کرنے سے روک دیا

اسلام آبادہائیکورٹ نے سنتھیارچی کو آئندہ سماعت تک ملک بدر کرنے سے روک دیا
اسلام آبادہائیکورٹ نے سنتھیارچی کو آئندہ سماعت تک ملک بدر کرنے سے روک دیا

  

اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن)اسلام آبادہائیکورٹ نے سنتھیارچی کو آئندہ سماعت تک ملک بدر کرنے سے روک دیا،عدالت نے حکم دیتے ہوئے کہاکہ آئندہ سماعت سے پہلے سنتھیارچی بیان حلفی میں تمام شکایات درج کرکے جمع کرائیں ،چیف جسٹس اطہر من اللہ نے کہاکہ روزانہ بہت شہریوں کے ویزے مستردکئے جاتے ہیں ،وجوہات بیان کرنے کی ضرورت نہیں ہوتی ،ویزہ بنیادی حق نہیں ، ایک استحقاق ہوتا ہے ۔

میڈیا رپورٹس کے مطابق امریکی شہری سنتھیارچی کی وزارت داخلہ کے احکامات کیخلاف درخواست کی سماعت ہوئی،وکیل سنتھیارچی نے کہاکہ ویزے میں توسیع نہ کئے جانے کی وجوہات بیان نہیں کی گئیں ۔

چیف جسٹس اطہر من اللہ نے کہاکہ روزانہ بہت شہریوں کے ویزے مستردکئے جاتے ہیں ،وجوہات بیان کرنے کی ضرورت نہیں ہوتی ،ویزہ بنیادی حق نہیں ، ایک استحقا ق ہوتا ہے ۔

چیف جسٹس ہائیکورٹ نے کہاکہ آزادی اظہاررائے کاحق غیر محدود نہیں ہوتا،آئین کے مطابق اس کی بھی حد ہوتی ہے ،عدالت نے استفسار کیا آپ کی ویزے کے علاوہ کوئی اورشکایات ہے؟،وکیل سنتھیارچی نے کہا کہ 2 درخواستیں ایف آئی اے میں زیرالتواہیں ۔

عدالت نے سنتھیارچی کو آئندہ سماعت تک ملک بدر کرنے سے روک دیا،عدالت نے حکم دیتے ہوئے کہاکہ آئندہ سماعت سے پہلے سنتھیارچی بیان حلفی میں تمام شکایات درج کرکے جمع کرائیں ،عدالت نے فریقین کو نوٹسزجاری کرنے کاحکم دیدیا اور سماعت ملتوی کردی ۔

مزید :

قومی -علاقائی -اسلام آباد -