دنیا کے وہ ممالک جن کا اپنا کوئی ایئرپورٹ نہیں ہے

دنیا کے وہ ممالک جن کا اپنا کوئی ایئرپورٹ نہیں ہے
دنیا کے وہ ممالک جن کا اپنا کوئی ایئرپورٹ نہیں ہے

  

لندن(مانیٹرنگ ڈیسک)آج بین الاقوامی سفر کے لیے ہوائی جہاز واحد آپشن بن چکے ہیں مگر کچھ ممالک ایسے بھی ہیں جہاں کوئی ایئرپورٹ ہی نہیں اور اس میں کچھ اچنبھے کی بات بھی نہیں کیونکہ ان ممالک کا رقبہ ہی اتنا ہے کہ پورے ملک کو ایئرپورٹ میں بدل دیں تو بھی ایئرپورٹ مکمل نہ ہو پائے گا، یعنی ان ممالک کے لیے آپ کہہ سکتے ہیں۔ انڈیا ٹائمز کے مطابق ان میں پہلا مناکو ہے جو دنیا کا دوسرا سب سے چھوٹا ملک ہے۔ مناکو کا کل رقبہ 2.02کلومیٹر ہے چنانچہ وہاں ایئرپورٹ بنانا ممکن نہیں۔ فرانس کا نیس کوتے ڈی ازور ایئرپورٹ مناکو کے قریب ترین ایئرپورٹ ہے جہاں سے اس ملک کے لوگ فضائی سفر کرتے ہیں۔

دوسرا ملک سین میرینو ہے جو اٹلی کے بیچوں بیچ خشکی کے ایک ٹکڑے پر مشتمل چھوٹا سا ملک ہے۔ اس ملک جانے کے خواہش مندوں کو اٹلی کے فیڈریکو فیلینی انٹرنیشنل ایئرپورٹ کے لیے ٹکٹ بک کروانے پڑتے ہیں۔ تیسرا ملک اینڈورا ہے جس کی سرحدیں سپین اور فرانس سے ملتی ہیں۔ سپین کا بارسیلونا ایل پریٹ اور فرانس کا تولوزی ایئرپورٹ اینڈورا کے قریب ترین ایئرپورٹس ہیں جہاں سے اس ملک کے لوگ سفر کرتے ہیں۔چوتھا ملک لیکٹنسٹائن ہے جو سوئٹزرلینڈ اور آسٹریا کے درمیان واقع ہے۔ اس چھوٹے سے ملک کا بھی اپنا کوئی ایئرپورٹ نہیں اور یہاں جانے والے ہمسایہ ممالک میں پہنچ کر وہاں سے زمینی سفر کرکے لیکٹنسٹائن پہنچتے ہیں۔پانچواں ملک ویٹی کن سٹی ہے جس کا کوئی ایئرپورٹ تو نہیں البتہ ایک ہیلی پورٹ ہے۔ اس کے قریب ترین ایئرپورٹس میں اٹلی کے روم شیامپینو اور روم فیومیشینو ایئرپورٹس شامل ہیں۔

مزید :

ڈیلی بائیٹس -