سندھ میں حالیہ بارشوں سےکتنےافرادجاں بحق اور20اضلاع میں کتنےلاکھ لوگ متاثرہوئے؟وزیر اعلیٰ مراد علی شاہ نےدگرگوں صورتحال کھول کر رکھ دی

سندھ میں حالیہ بارشوں سےکتنےافرادجاں بحق اور20اضلاع میں کتنےلاکھ لوگ ...
سندھ میں حالیہ بارشوں سےکتنےافرادجاں بحق اور20اضلاع میں کتنےلاکھ لوگ متاثرہوئے؟وزیر اعلیٰ مراد علی شاہ نےدگرگوں صورتحال کھول کر رکھ دی

  

سکھر(ڈیلی پاکستان آن لائن)وزیر اعلیٰ سندھ سید مراد علی شاہ نے کہاہے کہ بارش سے متاثرہ ہر علاقے میں جارہا ہوں،حالیہ بارشوں سے سندھ میں 136افراد  جاں بحق جبکہ صوبے کے بیس اضلاع کے 23لاکھ لوگ متاثر ہوئے ہیں، وزیراعظم کے کراچی کے دورے پر انہیں بارشوں سے ہونے والے نقصانات سے آگاہ کیا تھا تاہم کل  ان کو تفصیلی خط بھی لکھوں گا ۔

نجی ٹی وی کے مطابق وزیراعلیٰ سندھ سید مراد علی شاہ دریائے سندھ میں پیدا ہونے والی اونچے درجے کی سیلابی صورتحال کا جائزہ لینے کے لیےصوبائی وزراء اویس قادرشاہ, تیمور تالپور،سید فرخ شاہ، ارکان اسمبلی شرجیل میمن, امداد پتافی, فرخ شاہ ودیگر کے ہمراہ سکھر پہنچے اور انہوں نے سکھر بیراج، گڈو بیراج، تھوڑی بند کا دورہ کیا،اس موقع پر چیف انجنیئر سکھر بیراج ارشاد میمن و دیگر حکام نےان کو بریفنگ دی اور بتایا کہ دریائے سندھ میں جہاں جہاں حساس بند ہیں ان کی نہ صرف دن رات نگرانی کی جارہی ہے بلکہ وہاں پر مرمتی کام کرکے ان کومضبوط بھی بنایا جارہا ہے۔اس موقع پر میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے سید مراد علی شاہ نے کہا کہ حالیہ بارشوں سے سندھ میں 136افراد جاں بحق ہوئے ہیں جبکہ صوبے کے بیس اضلاع کے 23لاکھ لوگ متاثر ہوئے ہیں، وزیراعظم کے کراچی کے دورے پر انہیں بارشوں سے ہونے والے نقصانات سے آگاہ کیا تھا تاہم کل ان کو تفصیلی خط بھی لکھوں گا ۔انہوں نے کہا کہ میں بارش سے متاثرہ ہر علاقے میں جارہا ہوں  لیکن اینکر پرسنز بارش یا سیلاب متاثرہ علاقوں میں نہیں گئے،اس لیے انہیں اس حوالے سے اندازہ نہیں ہے۔ انہوں نے کہا کہ پارٹی چیئرمین بھی تین دن کے دورے پر نکل رہے ہیں، وہ بھی حالات کا  جائزہ لیں گے،دادو کے علاقہ کاچھو میں بڑی تباہی آئی ہے، عمرکوٹ اور سانگھڑ کے علاقے بھی شدید متاثر ہوئے،سکھر ریجن میں امن و امان کا مسئلہ ہے اسے بہتر کرنے کی کوشش کر رہے ہیں۔

مزید :

علاقائی -سندھ -سکھر -