ہربنس پورہ، قبضہ گروپ کیخلاف مشکوک آپر یشن، اہل علاقہ سراپا احتجاج

ہربنس پورہ، قبضہ گروپ کیخلاف مشکوک آپر یشن، اہل علاقہ سراپا احتجاج

  

لاہور)اپنے نمائندے سے (ہربنس پورہ میں سات کنال سرکاری اراضی واہ گزار کروانے کا دعویٰ، پٹواری حلقہ نے رپورٹ انتظامی افسران کو بھجوادی، ہربنس پورہ میں ہونے والی کارروائیوں کی اصل صورتحال چھپانے سے ریونیو سٹاف کا کردار مشکوک ہو گیا روز نامہ پاکستان کو ملنے والی معلومات کے مطابق تحصیل شالیمار کے پٹوار سرکل ہربنس پورہ کے پٹواری ملک تاج، قانونگو حمید میو اور متعلقہ پولیس کی جانب سے ہجویری سکیم کے باہر اور مین پر واقع دیوار کو گرانے پر ہجویری سکیم کے سینکڑوں شہری سراپا احتجاج بن گئے، ریونیو سٹاف کا گھیراؤ کرتے ہوئے ہجویری سکیم کے اندر جانے سے روک دیا گیا۔ اس حوالے سے ریونیو سٹاف نے موقف دیا کہ نفری کی کمی کے باعث آپریشن ناکام ہو گیا ہے اور کارروائی نہیں کی جاسکی جبکہ تھوڑی دیر بعد ہی ایک حلقہ پٹواری کی جانب سے ایک رپورٹ مرتب کرتے ہوئے تھانہ میں استغاثہ جمع کروایا گیا اور ایک ویڈیو فوٹیج بھی دیگر وٹس اپ گروپ میں پٹواری کی جانب سے شیئر کی گئی جس میں ایک چار دیواری کو ہاتھ سے گراتے ہوئے دکھایا گیا رپورٹ کے مطابق سات کنال گیارہ مرلے سرکاری اراضی ہجویری ہاؤسنگ سکیم کے نزدیک قبضہ گروپ سے واہ گزار کروائی گئی ہے جس کا خسرہ نمبر 1465ہے،موقع پر زوالقرنیں ولد محمد رمضان نامی شخص قبضہ کر رہا تھا قابل زکر بات یہ ہے کہ ریونیو سٹاف نے اپنے اعلی افسران کو صرف واہ گزار کروائے جانے والی کاروائی سے ہی آگاہ کیا ہے جہاں سے ناکامی ہوئی اس کاذکر نہیں کیا گیا۔ ذرائع نے دعویٰ کیا ہے کہ جو سات کنال گیارہ مرلے اراضی کی مذکورہ پٹواری ملک تاج نے ویڈیو کلپ بنا کر کارروائی کی ہے وہ فرضی اور بوگس ہے وہ چار دیواری ابھی بھی جوں کی توں ہے صرف ہاتھوں سے چند اینیٹں گرائی گئی ہیں۔ذرائع نے مزید کہا کہ محکمہ مال کے انتظامی افسران اس معاملے کا سختی سے نوٹس لیں کہ جو تعمیرات واہ گزار کروائی گی ہے ْاس کے ارد گرد خار دار تاریں لگائی جائیں۔ ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر ریونیو محمد اصغر جوئیہ نے کہا ہے کہ واہ گزار کروائی جانے والی سرکاری اراضی کا بھرپورتحفظ کیا جائے گا اور اس کو محفوظ بنانے کیلئے بھی فوری اقدامات کیے جائیں گے اس معاملے میں کوئی سستی یا تاخیر برداشت نہیں کی جائے گی۔

مزید :

میٹروپولیٹن 1 -