گندم خریداری مہم کے دوران صرف لائسنس یافتہ خریدار حصہ لے سکیں گے: چیف سیکرٹری پنجاب

گندم خریداری مہم کے دوران صرف لائسنس یافتہ خریدار حصہ لے سکیں گے: چیف ...

  

لاہور(نیوز رپورٹر)صوبے میں گندم خریداری مہم کا ہدف45لاکھ میٹرک ٹن مقرر کیا گیا ہے،تمام فیلڈ افسران کرونا وائرس کی روک تھام کے ساتھ ساتھ گندم خریداری کے چیلنج کو پورا کرنے کیلئے دن رات کام کریں۔ ان خیالات کاا ظہار چیف سیکرٹری پنجاب میجر (ر) اعظم سلیمان خان نے گندم خریداری مہم کے سلسلے میں انتظامات کا جائزہ لینے کیلئے منعقد اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے کیا۔ ایڈیشنل چیف سیکرٹری، سیکرٹری خوراک، کمشنر لاہور ڈویژن اور متعلقہ افسران نے اجلاس میں شرکت کی جبکہ ڈویژنل کمشنرز ویڈیو لنک کے ذریعے شریک ہوئے۔ اجلاس میں فیصلہ کیا گیا کہ گندم خریداری مہم کے دوران صرف لائسنس یافتہ خریدار حصہ لے سکیں گے۔چیف سیکرٹری نے کہا کہ پالیسی کے تحت ذاتی استعمال کے علاوہ گندم کی پرائیوٹ خریداری، ٹرانسپورٹیشن اور سٹوریج پر پابندی ہوگی۔ انہوں نے کہا کہ فیڈ ملوں اورغیر رجسٹرڈ سیڈ کمپنیوں کو گندم خریداری کی اجازت نہیں ہوگی۔ انہوں نے ہدایت کی کہ ذخیرہ اندوزی کی روک تھام کیلئے انتظامی افسران قانون نافذ کرنے والے اداروں سے رابطہ رکھیں اورذخیرہ اندوزوں کیخلاف سخت کارروائی عمل میں لائی جائے۔ چیف سیکرٹری نے کہا کہ بار دانہ کی تقسیم میں پہلے آئیے پہلے پائیے کی پالیسی پر عمل کیا جائے،باردانہ کی حد 200سے1000بوری تک ہوگی۔ اجلاس کو بریفنگ میں بتایا گیا کہ ضلع راجن پور میں کسانوں کی آن لائن رجسٹریشن اور بار دانہ کے اجراء کا آغاز کر دیا گیا ہے۔گندم کی بین الصوبائی اور اضلاع کے مابین ترسیل کو پنجاب انفارمیشن ٹیکنالوجی بورڈ (پی آئی ٹی بی) کی مددسے تیار کی گئی ایپلیکیشن کے ذریعے ریگولیٹ کیا جائے گا۔

اعظم سلیمان خان

مزید :

صفحہ آخر -