اس وقت کا بڑا چیلنج گندم کی کٹائی، کھیت سے گودام تک ترسیل: شہباز شریف

  اس وقت کا بڑا چیلنج گندم کی کٹائی، کھیت سے گودام تک ترسیل: شہباز شریف

  

لاہور(این این آئی) پاکستان مسلم لیگ (ن) کے صدر،و قائد حزب اختلاف شہباز شریف نے کہاکہ کسان اور کاشتکار سے ظلم و زیادتی نہیں ہونی چاہیے، ہم اسے برداشت نہیں کریں گے،ہمارے دور میں تاریخی کسان پیکیج دیاگیا، اسوقت سب سے بڑا چیلنج گندم کی کٹائی اور کھیت سے گودام تک پہچانا ہے،گندم کی خریداری، امدادی قیمت، کھیت سے گودا م تک کا سفرکیسے طے ہوگا، ان پر فوری تیاری کی ضرورت ہے۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے شعبہ زراعت سے متعلق پارٹی رہنماؤں اور ماہرین کے ویڈیو لنک اجلاس سے خطا ب کرتے ہوئے کیا۔ شہباز شریف نے کہا کرونا وباء نے دنیا کیساتھ پاکستان میں تباہی مچا رکھی ہے،تمام طبقات انفرادی واجتماعی طورپر اس کیخلاف کوشا ں ہیں،خدمت انسانیت کا اس سے بہتر موقع نہیں ہوسکتا۔ پارٹی رہنماؤں اور مختلف شعبہ جات، کا ر وباری حضرات، ڈاکٹرز، طبی عملے سے مشاورت کرکے تجاویز تیار کیں اور حکومت کوان ضرور یا ت سے آگاہ کیا،زراعت کے حوالے سے تجاویز مرتب کرنی ہیں تاکہ آنیوالے دنو ں میں کسانوں کی مدد ہوسکے،گندم کی کٹائی، کھیت سے گودام تک ترسیل، حکومتی خریداری کے حوالے سے سفارشات تیار کریں،کسانوں اور کاشتکاروں کے حقوق کے تحفظ کو یقینی بنانے کیلئے حکمت عملی بنائی جائے۔ مسلم لیگ (ن)نے ہمیشہ کسانوں اور زراعت کو بے انتہاترجیح دی ہے،نوازشریف نے ملک بھر کیلئے تاریخی کا کسان پیکیج دیا تھا،ہم نے صوبہ پنجاب میں سب کی مشاورت سے کا تاریخی کسان پیکیج دیا تھاچھوٹے،رقبے کے کسانوں کو بلا سود قرض فراہم کئے، اللہ تعالی کی برکت سے اجناس کی پیداوار دوگنا ہوئی،ہم نے قرض کے اجراء کو نہ صرف آسان بنایا تھا بلکہ قرض کے حصول پر لی جانیوالی فیس بھی معاف کردی تھی،ملکی تا ر یخ میں پہلی بار چھوٹے کسانوں اور کاشتکاروں کو بلا سود قرض دے کر زرعی اکانومی کوترقی دی گئی۔کھاد آدھی قیمت پر دی گئی،کسانوں کو سستی بجلی فراہم کی،ہم نے پنجاب میں ڈ یز ل سے چلنے والے ٹیوب ویلز پر رعایت دی۔ اس وقت سب سے بڑا چیلنج گندم کی کٹائی اور اسے کھیت سے گودام تک پہنچانا،گندم کی خریداری، امدادی قیمت، کھیت سے گودام تک کا سفرکیسے طے ہوگا ان پر فوری تیاری کرنے کی ضرورت ہے،گندم خریداری کے وقت لوگوں کا ہجوم لگے،نہ ان کی محنت ضائع ہو، اس کی فوری حکمت عملی بنانی ہوگی۔

شہباز شریف

مزید :

صفحہ اول -