ایف اے ٹی ایف نے پاکستان کو اہداف کے حصول کیلئے مہلت اکتوبر تک بڑھادی

ایف اے ٹی ایف نے پاکستان کو اہداف کے حصول کیلئے مہلت اکتوبر تک بڑھادی

  

اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک) فنانشل ایکشن ٹاسک فورس (ایف اے ٹی ایف) نے پاکستان کو اہداف حاصل کرنے کیلئے اکتوبر تک کی مہلت دیدی ہے۔ ایف اے ٹی ایف کو بتایا گیاکہ لاک ڈاؤن کی وجہ سے صنعتکاروں کے ساتھ مذاکرات اورلین دین کو دستاویزی بنانے میں مشکلات کا سامنا ہے۔ذرائع کے مطابق پاکستان فنانشل ایکشن ٹاسک فورس کے اہداف کے حصول کیلئے متحرک ہو گیا ہے جبکہ ایف اے ٹی ایف نے اہداف کے حصول کیلئے مزید سات ماہ کا وقت دیدیاہے۔ کرونا کی وجہ سے27 اہداف کے حصول کیلئے مزید وقت دیاگیا، لاک ڈاؤن کی وجہ سے انڈسٹری کیساتھ معاملات طے کرنے میں مشکلات پیش آ رہی ہیں۔ذرائع کے مطابق پاکستان کو اب یہ اہداف 30 اپریل تک کے بجائے اکتوبر تک حاصل کرنا ہوں گے۔ پاکستانی حکام نے ایف اے ٹی ایف کو بتایا کہ لاک ڈاؤن کی وجہ سے صنعتکاروں کے ساتھ معاملات طے کرنے اور لین دین کو دستاویزی بنانے کیلئے مذاکرات میں مشکلات کا سامنا ہے۔ ڈالر کی اسمگلنگ کی روک تھام کے لئے قوانین منظور ہو چکے ہیں، 10 ہزار سے زائد ڈالر بیرون ملک لے جانے پر اسٹیٹ بینک سے اجازت لینا ہوگی۔ ایف اے ٹی ایف کو بتایا گیا کہ کالعدم تنظیموں کے اکاؤنٹ اور اثاثے منجمند کرنے کے ساتھ ان سے وابستہ افراد کو سزائیں بھی دی گئی ہیں۔ مختلف وزارتیں اور محکمے ویڈیو لنک کے ذریعے رابطے میں ہیں۔

ایف اے

مزید :

صفحہ اول -