اسلام آباد ہائیکورٹ بار کے وفد کی ملاقات کی کوشش، چیف جسٹس اظہر من اللہ معذرت 

اسلام آباد ہائیکورٹ بار کے وفد کی ملاقات کی کوشش، چیف جسٹس اظہر من اللہ ...

  

  

اسلام آباد(آن لائن)اسلام آباد ہائیکورٹ بار ایسوسی ایشن کے صدر زاہد محمود راجہ کی قیادت میں وکلاء وفدکی چیف جسٹس اطہر من اللہ سے ملاقات کرنا چاہی،تاہم چیف جسٹس نے ملاقات سے معذرت کر لی،بعدازاں وکلا چیف جسٹس بلاک کے سامنے پھول رکھ کر واپس روانہ ہو گئے۔تفصیلات کے مطابق اسلام آباد ہائیکورٹ بار نے بعض وکلا کی جانب سے ہائیکورٹ کے چیف جسٹس بلاک پر حملے کے بعد حالات کو معمول پر لانے کیلئے چیف جسٹس اطہر من اللہ سے ملاقات کی کوشش کی،وکلا کی آمد سے قبل چیف جسٹس بلاک کے باہر سکیورٹی میں غیر معمولی اضافہ،، پولیس اور ایلیٹ فورس کی بھاری نفری تعینات کر کے چیف جسٹس بلاک کا مرکزی دروازہ بند کر دیا گیا، ہائیکورٹ بار ایسوسی ایشن کے صدر راجہ زاہد محمود کی سربراہی میں وکلا کا وفد چیف جسٹس بلاک پہنچا تو انہیں داخلے کی اجازت نہ ملی،پولیس اہلکاروں نے بتایا رجسٹرار بھی اسوقت آفس میں موجود نہیں،آپ ان سے فون پر رابطہ کر لیں،ذرائع کے مطابق ہائیکورٹ حملے میں ملوث وکلاء معافی مانگنے چیف جسٹس بلاک پہنچے تھے جن میں جیل سے رہائی پانے والے وکلاء بھی شامل تھے،انہوں نے کہاکہ ہم چیف جسٹس صاحب سے مل کر انھیں  پھول پیش کرنا چاہتے ہیں،اگر چیف جسٹس ملاقات نہیں کرتے تو یہ پھول صرف گیٹ پر رکھنے کی اجازت دی جائے،وکلاء کے اصرار پر پو لیس اہلکاروں نے پھول لے کر چیف جسٹس بلاک کے دروازے پر رکھ دیے۔یاد رہے 8فروری کو وکلا نے اسی چیف جسٹس بلاک پر حملہ اور توڑپھوڑکی تھی۔

وکلا ملاقات 

اسلام آباد(آن لائن)انسداد دہشت گردی عدالت کے جج راجہ جواد عباس حسن نے ہائیکورٹ میں چیف جسٹس بلاک پر حملے اور توڑ پھوڑ کیس میں گرفتار وکلاء کے جوڈیشل ریمانڈ میں توسیع کردی۔گذشتہ روز سماعت کے دوران تصدق حنیف،حماد سعید ڈاراورنصیر کیانی کو جیل سے عدالت لایاگیا عدالت نے تینوں کے جوڈیشل میں 14 اپریل تک توسیع کردی جبکہ تصدیق حنیف اور سعید ڈار کی ضمانت بعد از گرفتاری کی درخواست پر سرکاری وکیل میاں عامر سلطان گورائیہ نے مخالفت کرتے ہوئے کہا تینوں وکلاء واقعے میں ملوث تھے،جن کی ویڈیو فرانزک کیلئے بھیجی ہوئی ہے،دوران سماعت عدالت نے کہا ہائیکورٹ کا تحریری آرڈر آنے تک خالد تاج،راجہ فرخ کی روبکار جاری کی جائیگی،بعدازاں سماعت 14اپر یل تک کیلئے ملتوی کردی گئی۔یاد رہے ملزمان خالد تاج اور راجہ فرخ کی اسلام آباد ہائیکورٹ نے 50 ہزار کے ضمانتی مچلکوں کے عوض ضمانت منظور کر رکھی ہے۔

وکلاء ریمانڈ

مزید :

صفحہ آخر -