کیپٹل سٹی پولیس عباس احسن کا  سٹی ٹریفک پولیس پشاور میں یوٹیوب پر لائیو ٹرانسمیشن کاافتتاح

کیپٹل سٹی پولیس عباس احسن کا  سٹی ٹریفک پولیس پشاور میں یوٹیوب پر لائیو ...

  

پشاور(کرائمز رپورٹر) شہریوں کو ٹریفک قوانین اور ٹریفک نظام سے متعلق آگاہی دی جائیگی تاکہ انہیں کسی قسم کے مشکلات کا سامنا نہ کرنا پڑے، سٹی ٹریفک پولیس پشاور کو پورے صوبے کیلئے رول ماڈل کے طور پر پیش کریں گے، سی سی پی او عباس احسن تفصیلات کے مطابق کیپٹل سٹی پولیس آفیسر عباس احسن نے سٹی ٹریفک پولیس پشاور میں ایف ریڈیو کے طرز پر یوٹیوب پر لائیو ٹرانسمیشن کا آغاز کردیا۔ انسپکٹر جنرل آف پولیس ڈاکٹر ثناء اللہ عباسی کی ہدایت پر  سی سی پی او عباس احسن اور چیف ٹریفک آفیسر عباس مجید خان مروت نے شہریوں کو ٹریفک قوانین سے متعلق آگاہی دینے، ٹریفک نظام بارے سہولیات اور سڑکوں پر ٹریفک کی روانی بارے آگاہی دینے کیلئے باقاعدہ یوٹیوب پر لائیو ٹرانسمیشن کا آغاز کردیا تاکہ شہریوں کو کسی قسم کے مشکلات نہ ہوں اور وہ سٹی ٹریفک پولیس پشاور کی جانب سے ہر وقت ٹریفک نظام سے متعلق آگاہ ہوں اور انکو یوٹیوب لائیو ٹرانسمیشن کے زریعے متبادل روٹ سے متعلق آگاہی دی جائیگی تاکہ انکا قیمتی وقت ضائع نہ ہو اور ٹریفک کو با آسانی رواں دواں کیا جا سکے۔ یو ٹیوب لائیو ٹرانسمیشن آئی ٹی اصلاحات کی ایک کڑی ہے جس سے شہری بھر پور استفادہ حاصل کر سکتے ہیں شہری سٹی ٹریفک پولیس پشاور کے یوٹیوب چینل کو سبسکرائب کریں تاکہ وہ ہر قسم کی معلومات سے آگاہ ہوں کیونکہ یوٹیوب لائیو ٹرانسمیشن میں مختلف شعبہ جات کے ماہرین شرکت کریں گے جو صحت، ایجوکیشن، قانون روڈ سیفٹی و ٹریفک قوانین سے متعلق اپنے خیالات ویورز کیساتھ شیئر کرینگے۔ سی سی پی او عباس احسن نے مزید کہا کہ شہریوں اور ٹریفک وارڈنز و اہلکاروں کی آسانی کیلئے پہلے ہی ای چالان، کیمروں کی تنصیب، ڈیوٹی روسٹر کا اجراء کیا گیا ہے۔انہوں نے سٹی ٹریفک پولیس پشاور کی جانب سے آئی ٹی اصلاحات کے تحت اقدامات کی تعریف کی اور کہا کہ سٹی ٹریفک پولیس پشاور کے اقدامات سے ٹریفک عملہ اور شہریوں کو سہولیات میسر ہوں گی۔ اس موقع پر چیف ٹریفک آفیسر عباس مجید خان مروت نے کہا کہ ٹریفک سے متعلق مسائل حل کرنے اور سٹی ٹریفک پولیس پشاور کو ڈیجٹلائز کرنے کے لئے تمام تر صلاحیتیں بروئے کار لا رہے ہیں۔ انہوں نے مزید کہا کہ سٹی ٹریفک پولیس پشاور کو جدید تقاضوں کے تحت چلانا اولین ترجیح ہے جس میں کوئی کسر نہیں چھوڑیں گے اور سٹی ٹریفک پولیس پشاور کو پورے صوبے کیلئے رول ماڈل کے طور پر پیش کریں گ

مزید :

پشاورصفحہ آخر -