کراچی میں نوجوان لڑکا دو لڑکیوں کے ہمراہ گرفتار ، کیا غیر قانونی کام کر رہے تھے ؟ افسوسناک انکشاف 

کراچی میں نوجوان لڑکا دو لڑکیوں کے ہمراہ گرفتار ، کیا غیر قانونی کام کر رہے ...
کراچی میں نوجوان لڑکا دو لڑکیوں کے ہمراہ گرفتار ، کیا غیر قانونی کام کر رہے تھے ؟ افسوسناک انکشاف 

  

کراچی (ڈیلی پاکستان آن لائن )سٹیزن پولیس لائزن کمیٹی اور اینٹی وائلٹ کرائم سیل نے کارروائی کرتے ہوئے اغواءکا ڈرامہ رچانے والے نوجوان اور دو لڑکیوں کو گرفتار کر لیاہے ۔

تفصیلات کے مطابقاینٹی وائیلنٹ کرائم سیل پولیس اور سی پی ایل سی نے مشترکہ کارروائی کرتے ہوئے اورنگی ٹاو¿ن بنگلہ بازار میں چھاپہ مار کر مغوی نوجوان 17 سالہ نور شاہ ولد اللہ یار کو بازیاب کرتے ہوئے 2 لڑکیوں طوبیٰ اور شازیہ کو گرفتار کرلیا۔پولیس کے مطابق مغوی نور شاہ کے بھائی شہنشاہ نے 5 اپریل کو پاک کالونی پولیس کو اطلاع دی کہ اس کے بھائی کو اغوا کرلیا گیا اور اس کی رہائی کے عوض 2 لاکھ روپے تاوان کا مطالبہ کیا گیا ہے جس پر اے وی سی سی پولیس نے فوری کارروائی کرتے ہوئے مغوی کی بازیابی کے لیے کوششیں شروع کر دیں اور جس موبائل فون نمبر سے رابطہ کر کے اہلخانہ سے تاوان طلب کیا گیا تھا۔

پولیس نے جدید ٹیکنالوجی کی مدد سے اس کی لوکیشن کا سراغ لگاتے ہوئے مغوی لڑکے کو بازیاب کرا لیا جبکہ تفتیش کے دوران یہ بات سامنے آئی کہ لڑکا اغوا نہیں ہوا تھا بلکہ اس نے خود گرفتار خواتین کے ساتھ ملکر کر اغوا کا ڈرامہ رچایا تھا تاکہ اہلخانہ سے تاوان کی رقم وصول کر سکے، پولیس نے نوجوان کو بھی گرفتار کرلیا ہے۔

مزید :

علاقائی -سندھ -کراچی -