ترکی جلد ہی لاہور میں قونصلیٹ کھولے گا ‘پاک ترک بزنس ایسوسی ایشن

ترکی جلد ہی لاہور میں قونصلیٹ کھولے گا ‘پاک ترک بزنس ایسوسی ایشن

لاہور(کامرس رپورٹر) پاکستان ترکی بزنس ایسوسی ایشن کے چیف ایگزیکٹو آفیسر سعدی یلدیرر (Sadi Yildirir)نے کہا ہے کہ ترکی جلد ہی لاہور میں قونصلیٹ کھولے گا جس کا مقصد تاجروں کو ترکی سے کاروبار کرنے کے لیے زیادہ سے زیادہ سہولیات مہیا کرنا ہے۔ وہ ترکی کے بارہ رْکنی وفد کے دورہ لاہور چیمبر کے موقع پر گفتگو کررہے تھے۔ ترک وفد کے سربراہ توفیق آئیحان(Tevfik Ayhan)اور لاہور چیمبر کے صدر اعجاز اے ممتازنے بھی اس موقع پر خطاب کیا جبکہ سابق صدر بشیر اے بخش اور ایگزیکٹو کمیٹی اراکین بھی اس موقع پر موجود تھے۔ سعدی یلدیرر نے شرکاء کو آگاہ کیا کہ پندرہ اگست سے لاہور اور استنبول کے درمیان روزانہ کی بنیاد پر براہِ راست پروازیں شروع ہوجائیں گی۔ انہوں نے کہا کہ ترکی کا ایک اور وفد اگست کے تیسرے ہفتے میں پاکستان کا دورہ کرے گا جبکہ لاہور چیمبر کے اشتراک سے ایک سنگل کنٹری نمائش منعقد کرنے کا منصوبہ بھی ہے۔ لاہور چیمبر کے صدر اعجاز اے ممتاز نے کہا کہ پاکستان اور ترکی کے تاجروں کو اپنے تعلقات مزید مستحکم کرنے چاہئیں ، ترکی کی معاشی ترقی کے رول ماڈل کو سامنے رکھ کر پاکستان بھی تیزی سے معاشی ترقی کی راہ پر گامزن ہوسکتا ہے۔ لاہور چیمبر کے صدر نے کہا کہ یورپین یونین کی جانب سے جی ایس پی پلس سٹیٹس حاصل پاکستانی ٹیکسٹائل سیکٹر کے لیے جدید ٹیکنالوجی اور کپیسٹی بلڈنگ ناگزیر ہوگئی ہے تاکہ یہ اس بہترین موقع سے فائدہ اٹھاکر ٹیکسٹائل برآمدات میں دو ارب ڈالر اضافہ کرسکے۔ اعجاز اے ممتاز نے کہا کہ ترکی کو پاکستان کی صلاحیتوں اور جغرافیائی حیثیت سے بھرپور فائدہ اٹھانا چاہیے۔ انہوں نے کہا کہ ترقی یافتہ دنیا میں کوڑے سے توانائی پیدا کی جارہی ہے، اس سلسلے میں ترکی کا تجربہ پاکستان کے لیے مددگار ثابت ہوسکتا ہے ۔

انہوں نے کہا کہ دوطرفہ تجارت بڑھانے کے لیے دونوں ممالک کو عملی اقدامات اٹھانا ہونگے۔ انہوں نے کہا کہ اگر مشترکہ اقدامات اٹھائے جائیں تو پاک ترک تجارت کا حجم دو ارب ڈالر تک پہنچ سکتا ہے۔ لاہور چیمبر کے صدر نے مستقل بنیادوں پر بی ٹو بی میٹنگز کی ضرورت پر بھی زور دیا۔

مزید : کامرس