بچوں کوبٹھا کر وین کو پٹرول پمپ پر لے جانا جرم ہوگا:ڈی آئی جی ٹریفک

بچوں کوبٹھا کر وین کو پٹرول پمپ پر لے جانا جرم ہوگا:ڈی آئی جی ٹریفک
بچوں کوبٹھا کر وین کو پٹرول پمپ پر لے جانا جرم ہوگا:ڈی آئی جی ٹریفک

  

کراچی (مانیٹرنگ ڈیسک)کراچی ٹریفک پولیس نے سکولز وینز کیلئے نئے قوائد وضوابط کا اعلان کر دیاہےجس کے تحت بچوں کو وین میں بٹھا کر پٹرول پمپ پر لے جانا جرم تصور کیا جائے گا۔تفصیلات کے مطابق ڈی آئی جی ٹریفک امیر شیخ نے کہا ہے کہ کراچی میں تمام سکول وینز کا رنگ نیلا ہوگااور ہر وین کے اندر ایک اٹینڈنٹ ہونا ضروری ہے،جس پر گاڑی مالکان کا کہناہے کہ اٹینڈنٹ رکھنے سے خرچہ اضافی ہوگا جس کے باعث ہمیں کاروبار میں نقصان اٹھانا پڑے گا اس لیے ہمارے لیے وین میں اٹینڈنٹ رکھنا مشکل ہو گا۔ٹریفک آئی جی کا کہناتھا کہ وین مالکان وینز میں اضافی سیٹیں لگا لیتے ہیں جس کے باعث بچوں کو شدید مشکلات کا سامنا ہوتا ہےتاہم ٹریفک پولیس کی جانب سے نیا ضابطہ اخلاق جاری ہونے کے بعد سکول جانے والے بچے آسانی سے سفر کریں گے اور والدین کو بھی فکر نہیں لاحق ہو گی۔

ڈی آئی جی ٹریفک نے کہا کہ بچوں کوبٹھا کر سکول وین کو پٹرول پمپ پر لے جانا جرم ہوگا،تمام گاڑیا ں پٹرول اورڈیزل پر چلیں گی کسی بھی گاڑی میں سی این جی یا ایل پی جی سلنڈر نہیں ہو گا۔انہوں نے مزید کہا کہ تمام بچوں کو گاڑی میں سیٹ بائی سیٹ بٹھایا جائے گا،قواعد وضوابط پر عملدر آمد نہ کرنے والوں کو بھاری جرمانہ اور سزائیں ہوں گی۔

مزید : کراچی /اہم خبریں