امریکہ کیلئے خطرے کی گھنٹی بج گئی، چین نے وہ صلاحیت حاصل کر لی کہ خوفناک ترین ہتھیار بھی اس کے سامنے ناکارہ

امریکہ کیلئے خطرے کی گھنٹی بج گئی، چین نے وہ صلاحیت حاصل کر لی کہ خوفناک ترین ...
امریکہ کیلئے خطرے کی گھنٹی بج گئی، چین نے وہ صلاحیت حاصل کر لی کہ خوفناک ترین ہتھیار بھی اس کے سامنے ناکارہ

  

واشنگٹن (نیوز ڈیسک) چین نے حال ہی میں دفاعی میدان میں وہ کامیابی حاصل کرلی ہے کہ جس کے بارے میں جان کر امریکا اور اس کے اتحادی کانپ اٹھے ہیں۔ ’چائنا ڈیلی میل‘ کے مطابق چین نے بین البراعظمی بیلسٹک میزائلوں کو راستے میں تباہ کرنے کی طاقتور ترین ٹیکنالوجی تیار کرلی ہے۔ امریکا یہ ٹیکنالوجی تیار کرنے کیلئے کئی دہائیوں سے کوششیں کررہا ہے لیکن تاحال اس کی ٹیکنالوجی ایسی سطح پر نہیں پہنچ سکی کہ یہ بین البراعظمی میزائلوں کو مکمل کامیابی سے راستے میں تباہ کرسکے۔

چینی میڈیا کے مطابق چین کے ٹاپ لیزر سائنسدان چینگ یونگ کی قیادت میںجاری تحقیقی کام کامیابی سے مکمل ہونے کے بعد پہلی دفعہ نئی طرز کے فوٹو الیکٹرک ڈیوائس اور DLC فلم تیار کرلی گئی ہے، جس کے بعدچین دنیا کی پہلی ایڈجسٹمنٹ فری سالڈ لیزر بنانے میں کامیاب ہوگیا۔ یہ ایسی ٹیکنالوجی ہے کہ امریکا بھی اسے تیار کرنے کے محض خواب دیکھ رہا ہے۔

چینی سائنسدانوں نے 4 سال کی تحقیق کے بعد ایسی ٹیکنالوجی تیار کی ہے جو بین البراعظمی میزائلوں کو تباہ کرنے کیلئے ان کا پتہ چلانے والے آلات کیلئے ایسی ’آنکھ‘ بنانے میں استعمال ہوگی کہ جو سپرسانک رفتار پر بھی کسی صدمے یا کیمیکل سے متاثر نہ ہوگی۔ دفاعی تجزیہ کاروں کا کہنا ہے کہ اس ٹیکنالوجی نے چین کے مزائل دفاعی نظام کو دنیا کا طاقتور ترین نظام بنادیا ہے، اور امریکا کو فکر لاحق ہو گئی ہے کہ چین کے سامنے اس کے میزائل ناکارہ ہو کر رہ گئے ہیں۔

مزید : بین الاقوامی