پشین میں سی پیک انڈسٹریل زون کا قیام ،1000ایکڑ اراضی حاصل کرلی ، وزارت منصوبہ بندی

پشین میں سی پیک انڈسٹریل زون کا قیام ،1000ایکڑ اراضی حاصل کرلی ، وزارت منصوبہ ...

  



 اسلام آباد (اے پی پی) چین پاکستان اقتصادی راہداری منصوبہ (سی پیک) کے تحت بلوچستان کے ضلع پشین کی تحصیل بوستان میں انڈسٹریل زون کے قیام کیلئے اقدامات کا سلسلہ جاری ہے۔ وزارت منصوبہ بندی میں قائم سی پیک سیکرٹریٹ کے حکام نے ’’اے پی پی‘‘ کو بتایا کہ بوستان انڈسٹریل زون کے لئے 1000 ایکڑ اراضی حاصل کی جاچکی ہے اورصنعتی بستی کے قیام کیلئے اقدامات کا سلسلہ تیزی سے جاری ہے۔ حکام کے مطابق اس اقتصادی زون میں پھلوں، زرعی مشینری، فارما سیوٹیکل، موٹر سائیکل اسمبلنگ، کرومائیٹس، کوکنگ آئل، سیرامک انڈسٹری، آئس اینڈ کولڈ سٹوریج، برقی آلات، حلال فوڈ انڈسٹری اوردیگر متعلقہ صنعتوں کے قیام اور ان کیلئے سہولیات پر توجہ دی جائے گی۔ انہوں نے بتایا کہ بوستان انڈسٹریل زون 200 ایکڑ رقبہ پر ترقیاتی کام مکمل ہو چکا ہے۔ اس زون سے کوئٹہ ائیرپورٹ کا فاصلہ 23 کلومیٹر، سی پورٹ سے 713 کلو میٹر، کراچی سے 976 کلو میٹر، ڈرائی پورٹ (کوئٹہ) سے 32 کلو میٹر اور ہائی وے N-50 زیرو کلو میٹر ہے۔ اس منصوبہ میں اس وقت گیس اور بجلی کی سہولت دستیاب نہیں ہے جبکہ سڑکیں، گلیاں اور دیگر سہولیات موجود ہیں۔ ایک سوال پر انہوں نے بتایا کہ اس علاقے میں صنعتی بستی کے قیام کی تجویز صوبائی حکومت کی طرف سے آئی تھی۔ حکام کے مطابق سی پیک کے دوسرے مرحلے کے تحت پاکستان میں چین کے تعاون سے صعنتی انقلاب برپا ہوگا‘ اس مرحلہ میں ملک کے چاروں صوبوں، گلگت بلتستان، فاٹا اور آزاد کشمیر میں مجموعی طور پر9 صنعتی زونز بنائے جائیں گے۔

اس مقصد کیلئے صوبوں نے مختلف مقامات کی نشاندہی کی تھی جن میں خیبر پختونخوا کی جانب سے رشکئی اکنامک زون اور سندھ کی جانب سے چائنہ اکنامک زون دھاریجی، بلوچستان کی جانب سے بوستان اکنامک زون اور پنجاب کی جانب سے چائنہ اکنامک زون شیخوپورہ، گلگت بلتستان کی جانب سے مقپون داس گلگت جبکہ کشمیر کی جانب سے بھمبر صنعتی زون کو شامل کرنے کی تجویز دی گئی تھی۔ دارالحکومت اسلام آباد میں آئی سی ٹی ماڈل انڈسٹریل زون اور پورٹ قاسم میں پاکستان سٹیل ملز کی اراضی پرانڈسٹریل پارک بنانے جبکہ فاٹا کی جانب سے مومند ماربل انڈسٹریل زون بنائے جائیں گے۔

مزید : کامرس


loading...