کروڑوں کی کرپشن میں ملوث ایل ڈی اے کے ملازم ریمانڈ پر نیب کے حوالے

کروڑوں کی کرپشن میں ملوث ایل ڈی اے کے ملازم ریمانڈ پر نیب کے حوالے

  



لاہور(نامہ نگار)احتساب عدالت نے بوگس فائلیں بنا کر ایل ڈی اے کو کروڑوں روپے نقصان پہنچانے کے الزا م میں گرفتار4ملزموں کو 22اگست تک جسمانی ریمانڈ پر نیب کے حوالے کردیا ۔احتساب عدالت نے ایل ڈی اے میں بوگس فائلیں تیار کرنے کے الزام میں گرفتار حاجی انور، حافظ شوکت، عامر عبدالرحمان اور محمد سلیم کو ریمانڈ ختم ہونے پر عدالت میں پیش کیا ۔عدالت کو بتایا گیا کہ ملزمان سے ابھی پوچھ گچھ جاری ہے ،ان سے لوٹی ہوئی رقم اور پلاٹوں کی بوگس فائلیں برآمد کرنا ہے عدالت سے استدعا ہے کہ ملزمان کا مزید ریمانڈ دیا جائے۔ عدالت نے ریکارڈ کی پڑتال اور پراسکیوٹرکے دلائل کے بعد مذکورہ چاروں ملزمان کا بائیس اگست تک جسمانی ریمانڈ دے دیا۔علاوہ ازیں ایک دوسرے کیس میں احتساب عدالت میں نیب پنجاب نے غیرقانونی اثاثے بنانے کے کیس میں ملوث پی ڈبلیو ڈی کے سابق ایکسین ظہیر احمد وڑایچ کا ریفرنس پیش کردیاہے، ملزم نے 2013-14ء میں تعیناتی کے دوران کروڑوں روپے کے اثاثے بنائے تھے۔ریفرنس آنے پر کل ملزم کی طلبی کے احکامات جاری کئے جائیں گے۔

مزید : علاقائی


loading...