فلاحی معاشرہ کی تشکیل میں علماء کرام کا کردار انتہائی ناگزیر ہے :گورنر سندھ

فلاحی معاشرہ کی تشکیل میں علماء کرام کا کردار انتہائی ناگزیر ہے :گورنر سندھ

  



کراچی (اسٹاف رپورٹر) گورنر سندھ محمد زبیر نے کہا ہے کہ فلاحی معاشرہ کی تشکیل میں علماء کرام کا کردار انتہائی نا گزیر ہے،معاشرہ سے عدم برداشت کے رویہ کے خاتمہ میں علماء کرام محراب ومنبر سے اسلام کی صحیح تعلیمات کو عام کریں،اسلام انسانیت کا درس دیتا ہے اور انسانی حرمت کے تقاضہ بھی بڑے واضح ہیں۔ انہوں نے مزید کہا کہ حکومت عوامی فلاح و بہبود کے لئے بھرپور اقدامات کو یقینی بنا رہی ہے اس ضمن میں علما ء کرام کا تعاون باالخصوص صوبہ میں امن و امان کے تسلسل کے لئے بہت ضروری ہے ۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے گورنر ہاؤس میں جمعیت علماء پاکستان( نورانی ) کے سربراہ شاہ اویس نورانی کی قیادت میں 7 رکنی وفد سے ملاقات میں کیا ۔ وفد میں مفتی محمد غوث صابری ، محمد مستقیم نورانی ، حلیم خان غوری ، عطا اللہ خان ، محمد اسلم عباسی اور نوید احمد نورانی شامل تھے ۔ملاقات میں جاری صورتحال ، علما ء کرام کے کردار اور عوامی فلاح و بہبود اور معاشی خوشحالی کے لئے اٹھائے گئے اقدامات سمیت اہمیت کے حامل دیگر امور پر تفصیلی تبادلہ خیال کیا گیا ۔ گورنر سندھ نے کہا کہ مولانا شاہ احمد نورانی (مرحوم) کی جمہوریت کے لئے خدمات کو کسی بھی صورت میں فرامو ش نہیں کیا جا سکتا ، وہ ایک با اصول ، دھیمہ مزاج اور لوگوں سے محبت کرنے والی وضح دار شخصیت تھی ، ان کی ساری زندگی وضح کردہ اسلامی اصولوں کے مطابق انسانی زندگی کی تعمیر میں گذری اس ضمن میں حکومت وقت کو مفید مشورے بھی دیا کرتے تھے۔ انہوں نے کہا کہ موجودہ دور میں ترقیاتی عمل میں عوام کی بھرپور شرکت کو یقینی بنایا جا رہا ہے ، حکومت وفاقی ہی نہیں بلکہ پورے ملک کی یکساں ترقی کے وژن پر گامزن ہے ، صوبہ کے ترقی پذیر اضلاع ٹھٹھہ ، جیکب آباد ، حیدرآباد کے بعد کراچی کے لئے بھی وفاقی حکومت ترقیاتی پیکج کا جلد اعلان کرے گی جبکہ شہر میں وفاق کے تعاون سے پہلے ہی گرین لائن منصوبہ ، لیاری ایکسپریس وے ، پینے کے صاف پانی کا عظیم منصوبہ K-IV پر کام تیزی سے جاری ہے۔ انہوں نے کہا کہ امن و امان کے قیام کے بعد کراچی میں غیر ملکی سرمایہ کاری میں اضافہ ، نجی سیکٹر فعال ہونے سے روزگار کے وسیع مواقع دستیاب ہورہے ہیں جس سے غربت کے خاتمہ میں مدد مل رہی ہے جبکہ وفاقی حکومت کی معاشی پالیسی کے مثبت نتائج سے معاشی و اقتصادی ترقی میں موئثر اور جامع تبدیلی آرہی ہے ، معاشی اصلاحات سے ترقی کا پہیہ تیزیر سے چل پڑا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ مثالی معاشرہ کی تشکیل اور معاشی ترقی کے پہیہ کو مزید تیز کرنے کے لئے صوبہ کی تمام سیاسی جاعتوں کے رہنماؤں سے رابطہ کیا تھا جس کے زبردست نتائج سامنے آرہے ہیں ہر ایک صوبہ کی خوشحالی و ترقی کا نہ صرف خواہش مند بلکہ اس میں اپنا بھرپور کردار ادا کرنے کا خواہاں بھی نظر آیا جو کہ انتہائی خوش آئند ہے۔ انہوں نے کہا کہ جمیعت العماء پاکستان کو عوامی سطح پر زبردست پذیرائی حاصل ہے ، کراچی کی ترقی کے لئے جمعیت کا کردار بھی اہم ثابت ہو گا، علما ء کرام پاکستان کا قیمتی اثاثہ ہیں ، وفاقی حکومت علما ء کرام کے تعاون سے عوامی خوشحالی کو یقینی بنا رہی ہے ۔ ملاقات میں شاہ اویس نورانی نے کہا کہ جمعیت العلماء پاکستان ترقی و خوشحالی کے لئے حکومت سے بھرپور تعاون جاری رکھے گی ، عوامی فلاح وبہبود کے کام تمام جما عتوں کا منشور ہے اس ضمن میں ہر ممکن مدد بھی فراہم کرینگے ، ہم سب نے مل کر ہی پاکستان کے مستقبل کو سنوارنا ہے ۔

مزید : کراچی صفحہ اول