پنجاب حکومت کی طرف سے ایڈز کنٹرول کرنے کیلئے ایکٹ 2017 کی سفارشات تیار ‘ جان بوجھ کر مرض پھیلانے والے کو 5سال قید ‘ 2 لاکھ جرمانہ ہوگا

پنجاب حکومت کی طرف سے ایڈز کنٹرول کرنے کیلئے ایکٹ 2017 کی سفارشات تیار ‘ جان ...

  



ملتان( وقائع نگار) صوبائی حکومت پنجاب نے ایڈز جیسے موذی مرض پر کنٹرول کرنے کیلئے ایکٹ 2017 کی سفارشات تیار کر (بقیہ نمبر35صفحہ12پر )

لی ہے جس کے تحت تجویز دی گئی ہے کہ جان بوجھ کر ایڈز پھیلانے والے کو 5 سال قید اور 2 لاکھ روپے جرمانہ کیا جائیگا ۔ محفوظ انتقال خون ہو‘ اعضاء کی پیوندکاری اور گردوں کے مریضوں کے ڈائیلسز سے قبل ہیپاٹائٹس کے ساتھ ساتھ ایچ ای وی سی ٹسٹ بھی لازمی کروایا جائے کسی بھی ہسپتال اور مرکز صحت پر ایڈز کا مریض رپورٹ ہونے کی صورت میں فوری طور پر پنجاب ایڈز کنٹرول پروگرام کو اطلاع دی جائے ۔ ہسپتالوں میں ڈسپوزایبل سرنجز استعمال کی جائیں ‘ طبی فضلہ فوری تلف کیا جائے ‘ ایکٹ میں یہ بھی سفارشات دی گئی ہیں کہ تمام صوبوں کے داخلی و خارجی راستوں پر اور ائیر پورٹس پر ایڈز کے مرض سے آگاہی اور سکریننگ کیلئے ڈیسک قائم ہونے چاہیے ہر ہیر ڈریسرز ‘ بیوٹی پارلرز پر ایڈز کے پھیلاؤ کی روک تھام بارے اقدامات ہوں۔

ایڈز

مزید : ملتان صفحہ آخر