جرمن خاتون کی جیب میں موجود فاسفورس پھٹنے سے آگ لگ گئی

جرمن خاتون کی جیب میں موجود فاسفورس پھٹنے سے آگ لگ گئی
جرمن خاتون کی جیب میں موجود فاسفورس پھٹنے سے آگ لگ گئی

  



برلن(این این آئی) جرمن خاتون کے جیب میں موجود فاسفورس پھٹنے سے آگ بھڑک اٹھی اور اس کی جیکٹ کو آگ لگ گئی ۔

میڈیارپورٹس کے مطابق دریائے ایلب پر چہل قدمی کو جانے والی ایک جرمن خاتون نے وہاں کنارے سے قیمتی پتھر کے شبے میں سفید فاسفورس کا ایک ٹکڑا اٹھا لیا۔ 41 سالہ اس خاتون کو لگا کہ غالباً یہ قیمتی پتھر’’ عنبر ‘‘کا ٹکڑا ہے۔خاتون نے ایک سینٹی میٹر لمبے سفید فارسفورس کے ٹکڑے کو اپنی کوٹ کی جیب میں تو ڈالا لیکن اس کی قسمت اچھی تھی کیونکہ جب اس جیکٹ میں آگ لگی تو اس وقت اس نے اس کو پہنا نہیں ہوا تھا۔ دریائے ایلب کے کنارے پڑی تھی ۔حادثہ رونما ہوا تو وہاں موجود لوگوں نے فوری طور پر فائر بریگیڈ کو بلوا لیا۔جرمن شہر ویڈل میں فائر بریگیڈ اور متعلقہ عملے نے اس واقعے کے بعد وہاں دریائے ایلب کے کنارے کا مکمل معائنہ کیا لیکن ایسا مزید کوئی عنبر کی شکل کا کوئی ٹکڑا برآمد نہیں ہوا۔

افغان طالبان نے صرائے پل واقعہ میں ملوث ہونے کی تردید کردی

پولیس نے بتایا کہ سفید فاسفورس کا یہ ٹکڑا جب خشک ہوا تو اس میں کیمیائی ردعمل پیدا ہوا اور اسے آگ لگ گئی۔ پولیس کے مطابق سفید فاسفورس کا یہ ٹکڑا دراصل دوسری عالمی جنگ کے دوران کے کسی بم کا کوئی حصہ تھا۔ اس واقعے کے بعد جرمن حکام نے دریائے ایلب کی سیر کو جانے والوں کے لیے خصوصی ہدایات جاری کر دی ہیں کہ اگر انہیں’’ عنبر ‘‘ کی طرح کے کوئی پتھر نظر آئیں تو اسے فوری طور پر ہاتھوں سے مت اٹھائیں۔

مزید : بین الاقوامی