نوازشریف کی ریلی روکنے کیلئے پی ٹی آئی کی درخواست پر اسلام آباد ہائیکورٹ نے فیصلہ محفوظ کر لیا

نوازشریف کی ریلی روکنے کیلئے پی ٹی آئی کی درخواست پر اسلام آباد ہائیکورٹ نے ...
نوازشریف کی ریلی روکنے کیلئے پی ٹی آئی کی درخواست پر اسلام آباد ہائیکورٹ نے فیصلہ محفوظ کر لیا

  



اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن ) سابق وزیراعظم نوازشریف کی اسلام آباد سے لاہور کی ریلی روکنے کیلئے پاکستان تحریک انصاف کی درخواست پر اسلام آباد ہائیکورٹ نے آج صبح فیصلہ محفوظ کر لیاہے ۔

تفصیلات کے مطابق مسلم لیگ ن کی ریلی روکنے کے لیے گذشتہ روز پی ٹی آئی رہنما عثمان سعید بسرا نے اسلام آباد ہائیکورٹ میں درخواست دائر کی تھی۔ درخواست پر آج اسلام آباد ہائیکورٹ کے جج جسٹس عامر فاروق نے سماعت کی۔ جسٹس عامر فاروق نے کہا کہ بتایا جائے کہ کس قانون کے تحت ریلی پر پابندی عائد کی جائے؟ جس پر وکیل عثمان سعید نے کہا کہ نواز شریف نے بیان دیا کہ ان کی نا اہلی کا فیصلہ ایک سازش ہے۔لاہور تک جانے والی ریلی اسلام آباد سے شروع ہو گی۔ جسٹس عامر فاروق نے کہا کہ ریلی کا بڑا حصہ پنجاب میں ہو گا اور یہ عدالتی دائرہ اختیار میں نہیں ہے۔ انہوں نے کہا کہ ریلی کے شرکا اگر فیض آباد میں جمع ہو کر لاہور جائیں تو عدالتی دائرہ اختیار میں کیسے ہو گا؟ وکیل نے کہا کہ عدالت ماضی میں مداخلت کر چکی ہے۔ عدالت نے دو نومبر کو پی ٹی آئی کے لاک ڈاون کے دوران بھی مداخلت کی تھی۔ ہائیکورٹ نے دلائل سننے کے بعد درخواست کے قابل سماعت ہونے یا نہ ہونے سے متعلق فیصلہ محفوظ کر لیا۔

یاد رہے کہ گذشتہ روز پاکستان تحریک انصاف کے رہنما عثمان بسراءنے میاں محمد نواز شریف کی بذریعہ ریلی لاہور واپسی کے خلاف درخواست دائر کی تھی جس میں وفاقی حکومت اور ضلعی انتظامیہ کو فریق بنایا گیا تھا۔

مزید : اسلام آباد


loading...