آزادی کا اعلان ،سب کچھ لٹ گیا مگر پاکستان پہنچنے پر دلی سکون ،جلال الدین صدیقی

آزادی کا اعلان ،سب کچھ لٹ گیا مگر پاکستان پہنچنے پر دلی سکون ،جلال الدین ...

ملتان (سٹی رپورٹر) قےام پاکستان کے بعد 1947مےں بھارت کے ضلع کرنال کی تحصےل کتھےل سے پاکستان ہجرت کرکے ;200;نے والے 78سالہ بزرگ جلال الدین صدیقی نے کہا ہے کہ پاکستان بننے کی خبر ;200;تے ہی بھارتی سرکار نے ہندوءوں اور سکھوں کو لوٹ مار اور قتل و غارت کی اجازت دےدی ہمارا علاقہ قےام پاکستان سے قبل بہت پر امن تھا مسلمانوں کی اکثرےت ہونے کے باعث ہندو اور سکھ ہم سے ڈرتے تھے اکثر ہندو ہمارے پاس ملازمت کرتے تھے لےکن (بقیہ نمبر39صفحہ12پر )

جےسے ہی پاکستان بننے کی خبر ;200;ئی وہی وہی ملازم ہمارے دشمن بن گئے اےسا لگا جےسے بھارتی سرکار نے انہےں مسلمانوں کو لوٹنے اور قتل کرنے کانوٹےفکےشن جاری کردےا ہو‘ ہمارے سامنے ہندوءوں نے ماءوں سے بچے چھےن لئے اور ان کی گردن مےں نےزہ ڈال کر درختوں پر لٹکادےا ‘عورتوں کی بے حرمتی کی جاتی رہی مردوں کی گردنےں کاٹی جاتی رہےں بہت مشکل سے مےرے والدےن مجھ سمےت4بےٹوں اور 2بےٹےوں کو لے کر ٹرےن مےں سوار ہوئے تو ظالم سکھوں نے ٹرےن کو ;200;گ لگادی اللہ پاک کے کرم سے ہمارا پورا خاندان بچ گےا اور ہم بخےروعافےت پاکستان پہنچے اپنے ملک کی حدود مےں پہنچتے ہی بے سروسامانی کے باوجود دل کو بہت سکون ملا اےسا لگا کہ جےسے پناہ مےں ;200;گئے ہوں لےکن ;200;ج مسلمان مسلمان کا گلہ کاٹ رہا ہے ‘ماءوں کی گود اجاڑی جارہی ہے عورتوں کی عزتےں پامال کی جارہی ہے مساجد مےں فائرنگ‘ دھماکے ہورہے ہےں ‘کرپشن تمام اداروں کو گھن کی طرح چاٹ رہی ہے رشوت کے بغےر کوئی کام نہےں ہوتا ےہی سب کچھ کرنا تھا تو اتنی قربانےاں دے کر پاکستان حاصل کرنے کا کےا فائدہ تھا ۔ ہم نے جان‘ عزت و ;200;برو کی قربانےاں دے کر ےہ ملک حاصل کےا ہے تاکہ ;200;زادی سے زندگی بسر کرسکےں نئی نسل کو ان قر بانےوں کی قدر کرتے ہوئے پاکستان کی ترقی مےں کردار ادا کرنا چاہئے ۔

;200;زادی کے چراغ

مزید : ملتان صفحہ آخر


loading...