سکیورٹی اینڈ ایکس چینج کمیشن آف پاکستان‘ قانون کی خلاف ورزی پر 13 کمپنیوں کے لائسنس منسوخ

سکیورٹی اینڈ ایکس چینج کمیشن آف پاکستان‘ قانون کی خلاف ورزی پر 13 کمپنیوں کے ...

ملتان (نیوز رپورٹر) سیکورٹی اینڈ ایکسچینج کمیشن آف پاکستان نے 30 جون 2019ء کو ختم ہونے والی سہ ماہی کے دوران قانون(بقیہ نمبر28صفحہ12پر)

کی تعمیل نہ کرنے والی کمپنیوں کے خلاف کارروائی کرتے ہوئے کمپنیز ایکٹ 2017ء کی دفعہ 42 کے تحت لائسنس یافتہ 13 غیر منافع بخش کمپنیوں کے لائسنس منسوخ کر دیئے ہیں۔ ان کمپنیوں کے لائسنسوں کی منسوخی قانونی تقاضوں کی عدم پیروی یعنی اکاؤنٹس اور سالانہ گوشواروں کی تفصیلات نہ فراہم کرنے کی وجہ سے کی گئی جبکہ ان میں سے کچھ کمپنیاں رجسٹریشن کے بعد سے اب تک غیر فعال تھیں  کمپنیوں کے لائسنس منسوخ ہونے پر یہ کمپنیاں خود کو رضاکارانہ طور پر بند کرنے کیلئے قانونی طریقہ کار اپنائیں گی اور کسی بھی قسم کے اثاثہ جات اور واجبات نہ ہونے کی صورت میں یہ کمپنیاں غیر منافع بخش اداروں کمپنیر ایکٹ 2017ء کی دفعہ 43 کی شرائط کو مخیر (چیرٹ ایبل) ایسوسی ایشن اور غیر منافع بخش اداروں کے اوبجیکٹس ضوابط 2018ء کے ساتھ ملا کر پڑھتے ہوئے، ان کمپنیوں کے رجسٹر سے اپنے نام کے خاتمہ کیلئے درخواست دیدیں گی۔ 

منسوخ

مزید : ملتان صفحہ آخر


loading...