محکمانہ ترقی‘ دو سال فیلڈ تجربہ کی شرط ختم‘ سب انسپکٹرز کا افسروں کیخلاف خاموش احتجاج

محکمانہ ترقی‘ دو سال فیلڈ تجربہ کی شرط ختم‘ سب انسپکٹرز کا افسروں کیخلاف ...

ملتان (وقائع نگار)آئی جی پنجاب نے صوبہ بھر کے سب انسپکٹر کو انسپکٹر کے عہدے پر محکمانہ ترقی دینے کیلئے بطور سب انسپکٹر دو سال(بقیہ نمبر29صفحہ12پر)

فیلڈ تجرجہ کی شرط ختم کردی ہے۔جس پر فیلڈ میں کام کرنے والے پولیس سب انسپکٹروں نے اپنے افسران کے فیصلے پر عدم اعتماد کا اظہار کرڈالا ہے۔پولیس ذرائع سے معلوم ہوا ہے ملتان سمیت صوبہ بھر میں فیلڈ میں کام کرنے والے سب انسپکٹروں کو ہر وقت یہ شکایات رہتیں تھیں کہ جب بھی انسپکٹر کی پروموشن کا وقت آتا ہے۔تو اس ٹائم دفتروں۔سپشل برانچ۔سی ٹی ڈی۔پٹرولنگ پولیس سمیت دیگر یونٹس میں تبادلہ کرواکر چلے جاتے ہیں۔جسکی وجہ سے انکو سزاء جزاء کم ملتی ہیں۔جبکہ دوسری جانب فلیڈ مین بطور سب انسپکٹر کام کرنے والوں کو آئے روز کسی ن کسی وجہ سے سزا مل جاتی ہے۔اور پھر یہیں وجہ ترقی میں رکاوٹ بن کر سامنے آجاتی ہے۔سابق دور حکومت میں تعینات آئی جی پنجاب نے فیلڈ میں کام کرنے والے سب انسپکٹروں کی شکایات کو مد نظر رکھتے ہوئے صوبہ بھر کے سب انسپکٹروں کو انسپکٹر کے عہدے پر محکمانہ ترقی دینے کیلئے دو سال فیلڈ میں کام کرنے کی شرط عائد کی تھی۔مگر موجودہ آئی جی پنجاب عارف نواز نے اب فیلڈ میں دو سال بطور سب انسپکٹر کام کرنے والے کی رائے شرط ختم کردی ہے۔جس کا باقاعدہ نوٹیفیکشن بھی جاری کردیا گیا ہے۔اس لحاظ سے محکمہ پولیس کے کسی بھی یونٹس میں کام کرنے والے سب انسپکٹر کی اسی کو فیلڈ پوسٹنگ تصور کی جائے گی۔مذکورہ احکامات کے بعد فیلڈ میں کام کرنے والے سبا انسپکٹروں نے اپنے پولیس افسران پر عدم اعتماد کا اظہار کردیا ہے۔اور اصلاح احوال کا مطالبہ کیا ہے۔

ترقی

مزید : ملتان صفحہ آخر


loading...