راولپنڈی،بارش نے تباہی مچادی چھت گرنے اور برساتی نالے میں بہہ کر 6افراد جاں بحق

راولپنڈی،بارش نے تباہی مچادی چھت گرنے اور برساتی نالے میں بہہ کر 6افراد جاں ...

راولپنڈی(آن لائن)ملک کے دیگر حصوں کی طرح راولپنڈی میں بھی منگل اوربدھ کی درمیانی رات طوفانی اور موسلا دھار بارش کے دوران ایک ہی خاندان کے4افراد سمیت6افراد ڈوب کر جاں بحق ہو گئے پہلے واقعے میں مکان گرنے سے گھر کا سربراہ اس کی اہلیہ اورکم سن بیٹاجاں بحق اور2بیٹے برساتی ریلوں میں بہہ کر لاپتہ ہو گئے 6افراد کو زندہ بچالیا گیا مذکورہ تمام افراد کا تعلق ایک ہی خاندان سے تھاجبکہ ڈھوک چوہدریاں میں نالے کے کنارے کھیلتا بچہ اور ڈی ایچ اے کے قریب کار سوار برساتی نالے کی طغیانی میں بہہ گیا سواں بس اڈے کے قریب لینڈ سلائیڈنگ کے باعث کار سوار فیملی سمیت متعدد لوگ دریائے سواں کے پانی میں پھنس گئے ادھرمسلسل بارش کے باعث نالہ لئی میں پانی کی سطح خطرے کے نشان تک پہنچ گئی جس سے نالہ لئی کے ارد گرد نشیبی علاقوں میں پری الرٹ کر دیا گیا نالہ لئی سمیت دیگر ملحقہ نالے بھر جانے سے شہر کے متعدد نشیبی علاقوں میں پانی گھروں اور دکانوں میں داخل ہو گیا جس سے ضلعی انتظامیہ، واسا، میونسپل کارپوریشن اور سول ڈیفنس سمیت تمام متعلقہ اداروں کو الرٹ کر دیا گیا۔ریسکیو اداروں کے مطابق مورگاہ کے متصل علاقے میں جھامرہ میں واقع برساتی نالے میں طغیانی کے باعث نالے کا پانی کنارے پر واقع مکان کی بیرونی دیوار گرا کر گھر کی بیسمنٹ میں داخل ہو گیا جس سے مکان کی چھت گرجانے سے گھر کے سربراہ اور اس کی2بیویوں سمیت11افراد پانی میں بہہ گئے امدادی ٹیموں نے رات گئے آپریشن کر کے 35 سالہ مسرت زوجہ ریاض اوراس کے9 سالہ بیٹے ظہیر کی نعش نکال لی جبکہ10 سالہ بیٹا وہاب اور 21 سالہ عنائیت پانی میں بہہ کر لاپتہ ہو گئے جن کی تلاش جاری ہے امدادی ٹیموں نے فوری کاروائی کرتے ہوئے گھر کے سربراہ 55 سالہ ریاض اور اسکی دوسری بیوی 35 سالہ دلشاد بی بی،18سالہ بیٹی نبیلہ، 17 سالہ لیاقت، 13 سالہ زین 12 سالہ غضنفر اور افتخار کو گھر کے اندر سے ہی زندہ نکال لیاتاہم بعد ازاں گھر کا سربراہ ریاض بھی جان کی بازی ہار گیاڈی ایچ اے کے قریب 32سالہ محسن سکنہ خرم کالونی گاڑی سمیت برساتی نالے میں ڈوب کر جاں بحق ہو گیامحسن اپنے دوست کو چھوڑنے کے لئے ڈی ایچ اے گیا تھا کہ واپسی پر برساتی ریلے کی نذر ہو گیا ادھرڈھوک چوہدریاں میں کارچوک کے قریب قبرستان والی گلی نمبر 11 میں واقع نالے میں کمسن بچہ تیز بہاؤ کی نذر ہو گیا متوفی رات گئے دیگر بچوں کے ساتھ برساتی پانی میں کھیل رہا تھے کہ پاؤں پھسل جانے سے نالے میں بہہ گیااسی طرح سواں نالے کے قریب سلائیڈنگ سے کار سوار فیملی سمیت متعدد افراد برساتی پانی میں پھنس گئے جس کی اطلاع ملتے ہیں امدادی ٹیمیں موقع پر پہنچ گئیں جنہوں نے تمام افراد کو بحفاظت ریسکیو کر لیاادھربارش کے دوران کٹاریاں میں نالہ لئی میں گوالمنڈی کے مقام پرپانی کی سطح خطرے کے نشان سے ڈیڑھ فٹ نیچے ساڑھے12 فٹ پر پہنچ گئی جبکہ کٹاریاں کے مقام پرپانی کی سطح 13فٹ تک پہنچ گئی جس پر پری الرٹ جاری کر کے مقامی آبادی کو حفاظتی تدابیر کی ہدائیت کی گئی ہیں۔

چھ ہلاک

مزید : صفحہ آخر


loading...