مقبوضہ کشمیر کی آئینی حیثیت کا خاتمہ انسانی حقوق اور قانون پر ضرب 

    مقبوضہ کشمیر کی آئینی حیثیت کا خاتمہ انسانی حقوق اور قانون پر ضرب 

جنیوا(آئی این پی) عالمی کمیشن آف جیورسٹس نے مقبوضہ کشمیر کی آئینی حیثیت ختم کرنے کے بھارتی اقدام کو آئین و قانون کی خلاف ورزی قرار د یتے ہو ئے کہا ہے مقبوضہ کشمیر سے متعلق بھارتی اقدام انسانی حقوق اور قانون کی بالادستی پر ضرب ہے، بھارتی عدالت کو آئینی و قانونی خلاف ورزی کا جائزہ لینا ہوگا، تمام نگاہیں بھارتی سپریم کورٹ پر ہیں،وہ کشمیریوں کے حقوق کے تحفظ کی ذمہ داری نبھائے،آئی سی جے کی جانب سے جاری بیان میں کہا گیا ہے مقبوضہ کشمیر کی آزاد حیثیت کے خاتمے سے انسانی حقوق کے بحران میں شدت آئے گی،آئی سی جے کے اعلامیہ میں کہا گیا ہے مقبوضہ کشمیر میں احتجاج روکنے کیلئے کمیونی کیشن نظام کا بلیک آؤٹ کیا گیا، فوج بڑھائی گئی، سیاسی قیادت کو نظر بند کیا گیا، مقبوضہ کشمیر کے باسیوں پر ڈریکونین پابندیاں لگائی گئی ہیں، یہ ا قد ا م نہ صرف عالمی بلکہ بھارت کے داخلی اسٹینڈرڈ کے بھی خلاف ہے، بھارتی عدالت کو آئینی اور قانونی خلاف ورزی کا جائزہ لینا ہوگا۔سیکریٹری جنرل آئی سی جے کا کہنا تھا تمام نگاہیں بھارتی سپریم کورٹ پر ہیں، سپریم کورٹ کشمیریوں کے حقوق کے تحفظ کی ذمہ داری نبھائے۔

آئی سی جے

مزید : صفحہ اول


loading...