مردان کو پولیو سے پاک ضلع بناکر ہی دم لیں گے، عابد خان وزیر

مردان کو پولیو سے پاک ضلع بناکر ہی دم لیں گے، عابد خان وزیر

مردان (بیورورپورٹ)ڈپٹی کمشنر مردان محمد عابد خان وزیر نے کہا ہے کہ مردان کو پولیو سے پاک ضلع بنا کے دم لیں گے جس کے لئے جہاں تک ممکن ہو دستیاب وسائل کو بروئے کار لایا جائیگا، تاکہ ضلع بھر کے 4لاکھ 20ہزار 228ٹارگٹڈ بچوں کو پولیو کے قطرے پلائے جاسکیں۔ اور کوئی بھی بچہ پولیو قطرے پلانے سے نہ رہ پائے۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے اپنے دفتر میں انسداد پولیو کی چار روزہ مہم کے بارے میں منعقدہ اجلاس کی صدار ت کرتے ہوئے کیا۔ ضلعی انتظامیہ مردان کی زیر نگرانی پولیو کی 4 روزہ مہم 26 اگست سے لیکر 29 اگست تک جاری رہے گی۔ اس موقع پر ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر نیاز محمد،ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر فنانس اینڈ پلاننگ نیک محمد، ڈی ایچ او مردان عبید الرحمان، این سٹاپ آفیسر ڈاکٹر ذیشان،ڈی ایس پی سیکورٹی شیر امان خان، ڈبلیو ایچ او اور یونیسیف کے نمائندوں، اے ڈی آئی ایس آئی، آئی بی، اور ایم آئی سمیت دیگر متعلقہ محکموں کے افسران نے شرکت کی۔ اس موقع پر این سٹاف آفیسر ڈاکٹر ذیشان نے ڈپٹی کمشنر مردان کو مہم کے بارے میں تفصیلی بریفنگ دی۔۔ مہم میں 1186 ٹیمیں گھر گھر جا کر بچوں کو پولیو کے قطرے پلا ئیں گی مہم کے دوران 81 یو سی ایم اوز اور 319 ایریا انچارج جبکہ ان ٹیموں کی حفاظت کے لیے تقریباً 2300 پولیس کے اہلکار موجود ہونگے۔اس مہم کے دوران انکاری والدین کوبھی قائل کر کے بچوں کو پولیو سے بچاؤ کے قطرے پلائیں گے۔ڈپٹی کمشنر مردان نے اس موقع پر والدین سے اپیل کی کہ وہ اپنے بچوں کو پولیو سے بچاؤ کے قطرے پلائیں اور کسی بھی پروپیگنڈے کا شکار نہ ہوں کیونکہ پولیو ایک ایسا موذی مرض ہے جس کی وجہ سے بچہ ساری عمر کے لیے معذور ہو جاتا ہے۔ انھوں نے اس موقع پر پولیو ٹیموں کے لیے سیکیورٹی سمیت تمام ضروری اقدامات بروقت اٹھانے کی ہدایت کی۔ڈپٹی کمشنر مردان نے مزید کہا کہ وہ اپنے علاقوں میں مکمل چھان بین کریں تا کہ کوئی بچہ بھی پولیو کے قطرے سے نہ بچ سکے۔انہوں نے تمام متعلقہ افسران کو سختی سے ہدایت کی کہ کوئی بھی اس مہم میں رکاوٹ بنے تو انکے خلاف سخت تادیبی کاروائی عمل میں لائی جائیگی۔ انہوں نے علمائے کرام اور دیگرمکاتب فکر کے نمائندوں سے تعاون کی اپیل کی۔

مزید : پشاورصفحہ آخر


loading...