5 راہزن گرفتار لاکھوں روپے مالیت کے مسروقہ موبائل کارڈز برآمد

  5 راہزن گرفتار لاکھوں روپے مالیت کے مسروقہ موبائل کارڈز برآمد

پشاور(کرائمز رپورٹر) کیپٹل سٹی پولیس پشاور نے چند یوم قبل تھانہ گلبہار کی حدود میں نجی کمپنی کے ملازم سے 10 لاکھ روپے مالیت کے کالنگ کارڈز چھیننے والے مرکزی ملزم سمیت 5ملزمان کو گرفتار کر لیا، گرفتار ملزمان نے ابتدائی تفتیش کے دوران راہزنی کے متعدد وارداتوں میں ملوث ہونے کا اعتراف کر لیاہے جن کی نشاندہی پر ان کے قبضے سے لاکھوں روپے مالیت کے مسروقہ موبائل کارڈز بھی برآمد کرلئے گئے ہیں، گرفتار ملزمان سے مزید تفتیش جاری ہے جس کے دوران ان سے مزید اہم اور سنسنی خیز انکشافات کی توقع کی جا رہی ہے تفصیلات کے مطابق مدعی محمد رمیز ولد عبد النبی سکنہ چارسدہ روڈ عید گاہ کالونی حال ملازم نجی کمپنی نے کو تھانہ گلبہار پولیس کو رپورٹ کی تھی کہ وہ 10 لاکھ روپے مالیت کے کالنگ کارڈز سوات بھیجنے کی خاطر حاجی کیمپ اڈہ آرہا تھا کہ بمقام قادر آبادچند نا معلوم ملزمان نے اسلحہ کی نوک پر اس سے 10 لاکھ روپے مالیت کے موبائل کالنگ کارڈز چھین کر فرار ہو گئے جس کی رپورٹ پر مقدمہ درج کرکے تفتیش شروع کر دی گئی ایس ایس پی آپریشن ظہور بابر آفریدی نے واقعہ کا سختی سے نوٹس لیتے ہوئے ایس پی سٹی عتیق شاہ کی سربراہی میں اے ایس پی گلبہار زنیر احمد چیمہ اور ایس ایچ او تھانہ گلبہار قاضی نثار پر مشتمل خصوصی ٹیم تشکیل دیتے ہوئے واردات میں ملوث ملزمان کو جلد از جلد ٹریس کرکے گرفتار کرنے کا ٹاسک حوالہ کیا، تفتیشی ٹیم نے جدید سائنسی خطوط پر تفتیش جاری رکھتے ہوئے متعدد جرائم پیشہ افراد کو شامل تفتیش کرکے ان کے بیانات قلمبند کئے، اسی طرح متعدد دیگر مشکوک افراد کو بھی شامل تفتیش کیا گیا جس کے دوران واردات میں ملوث ملزمان کا سراغ لگا کر گزشتہ روز کامیاب کارروائی کے دوران مرکزی ملزم سمیت 5ملزمان ندیم ولد گلا خان،اکرام ولد اسد اللہ ،صدیق ولد معروف ساکنان سٹی ٹاﺅن،عادل ولد عابد سکنہ چارسدہ اور سنی ولد امانوائیل سکنہ کرسچین کالونی تہکال کو گرفتار کر لیا،گرفتار ملزمان نے ابتدائی تفتیش کے دوران متعدد وارداتوں میں ملوث ہونے کا اعتراف کر لیا ہے جن کی نشاندہی پر ان کے قبضے سے چھینے گئے10 لاکھ روپے مالیت کے موبائل کالنگ کارڈز برآمد کر لئے گئے، گرفتار ملزمان سے مزید تفتیش جاری ہے جس کے دوران ان سے مزید اہم اور سنسنی خیز انکشافات کی توقع کی جا رہی ہ

مزید : پشاورصفحہ آخر


loading...