ایل این جی کیس، نیب پراسیکیوٹر نے مفتاح اسماعیل کا15 سال کا جسمانی ریمانڈ مانگ لیا

ایل این جی کیس، نیب پراسیکیوٹر نے مفتاح اسماعیل کا15 سال کا جسمانی ریمانڈ ...
ایل این جی کیس، نیب پراسیکیوٹر نے مفتاح اسماعیل کا15 سال کا جسمانی ریمانڈ مانگ لیا

  


اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن)احتساب عدالت نے ایل این جی کیس میں گرفتار سابق وزیر خزانہ مفتاح اسماعیل اور سابق ایم ڈی پی ایس او عمران الحق کو 11 روزہ جسمانی ریمانڈ پر نیب کے حوالے کردیا۔تفصیلات کے مطابق نیب کی ٹیم نے ایل این جی کیس میں گرفتار ملزمان مفتاح اسماعیل اور عمران الحق کو احتساب عدالت میں پیش کردیا،عدالت نے کہا کہ ملزموں کی گرفتاری کا ریکارڈ پیش کیا جائے، نیب پراسیکیوٹر نے اسلام آبادہائیکورٹ کا فیصلہ عدالت میں پیش کردیا،جج احتساب عدالت نے استفسار کیا کہ ملزموں کا کتنا دن کا استفسار چاہئے ،نیب پراسیکیوٹر نے غلطی سے 15 سال کی استدعا کردی ،اس پر مفتاح اسماعیل نے حیرت کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ پندرہ سال ، نیب پراسیکیوٹر نے تصحیح کرکے15 دن کہہ دیا،عدالت نے کہا کہ 10 دن بعد اتوار آرہا ہے عدالت نے ایک دن اور بڑھا کر11 روزہ ریمانڈ پر نیب کے حوالے کردیا اورملزموں کو 19 اگست کو دوبارہ پیش کرنے کا حکم دیدیا۔

مزید : قومی /علاقائی /اسلام آباد


loading...