ملت اسلامیہ کو فاروق اعظمؓ کے غلام حکمرانوں کی ضرورت ہے،زوار بہادر

ملت اسلامیہ کو فاروق اعظمؓ کے غلام حکمرانوں کی ضرورت ہے،زوار بہادر

  

لاہور(نمائندہ خصوصی)جمعیت علماء پاکستان کے رہنماعلامہ قاری محمد زوار بہادر نے کہا ہے کہ آج ملت اسلامیہ کو فاروق اعظم کے غلام حکمرانوں کی ضرورت ہے جو مظلوم مسلمانوں کی مدد کو پہنچے اور جن کے گلے کٹ رہے ہیں گھر لٹ رہے حکمران ان کے جان و مال کی حفاظت کا فریضہ سرانجام دیں آج حکمرانوں کو صرف اپنی جان کی حفاظت کی فکر ہے اپنی رعایا کی نہیں انہوں نے کہا کہ سیدنا فاروق اعظم کے طرز حکمرانی پر عمل پیرا ہو کر ہی ملت اسلامیہ درست سمت میں آگے بڑھ سکتی ہے۔وہ بے شمارفضائل ومناقب کے حامل ہونے اور پچیس لاکھ مربع میل کے فرمانروا ہونے کے باوجود بے انتہا سادہ زندگی بسر فرماتے تھے حکمرانوں کو سیدنا فاروق اعظم کی سیرت پر عمل پیرا ہو کرحقیقی معنوں میں عوام کا خادم بننا چاہیے۔

انہوں نے کہاکہ سیدنا فاروق اعظم رسول اللہ کے جانثار درویش منش حکمران تھے۔

رعایا کی حفاظت کے لئے مدینہ منورہ کی گلیوں میں راتوں کو پہرہ دیتے تھے محروم لوگوں کو ان کی ضروریات کا سامان خود اٹھا کر گھروں میں پہنچاتے تھے اللہ پاک نے ان کے ذریعے دنیا پر اسلام کو غالب فرمادیا آج ان کے نقش قدم پر چلنے کی ضرورت ہے۔انہوں نے کہا ہے کہ آج خلفاء راشدین کے خلاف زبان تعن دا ز ئی جارہی ہے جب اللہ اور کے رسول آقائے دو جہاں کو اللہ پاک نے پوری کائنات بلکہ تمام انبیاء کی امتوں میں سے بہترین اصحاب عطاء فرمائے ہیں۔ کچھ شرپسندان مقدس ہستیوں کے خلاف زہراگل کر ملکی سا لمیت کو نقصان پہنچانا چاہتے ہیں۔ قاری زوار بہادر نے مطالبہ کیا کہ حکومت اور ادارے اپنا کردارادا کریں اور ملک کے حالات خراب کرنے والوں کو فوری گرفتار کرکے سزا دی جائے ان خیالات کا اظہار انہوں نے جامعہ محمدیہ رضویہ میں ایک عظیم الشان اجتماع سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔

مزید :

میٹروپولیٹن 1 -