کورونا وائرس،گریجویشن کا ایسا اختتام میں نے سوچا نہیں تھا، ملالہ 

        کورونا وائرس،گریجویشن کا ایسا اختتام میں نے سوچا نہیں تھا، ملالہ 

  

 اسلام آباد (این این آئی)نوبیل انعام یافتہ ملالہ یوسفزئی کا عالمی وبا کورونا وائرس لاک ڈاؤن کے دوران اپنی گریجویشن کے اختتام سے متعلق کہا ہے کہ انہوں نے ایسا سوچا بھی نہیں تھا کہ اْن کی گریجویشن کا اختتام ایسا ہوگا۔ملالہ سوسفزئی نے اپنے ایک انٹرویو کے دوران بتایا کہ انہوں نے گزشتہ سال 2019ء کی آخری مہینے میں ایسٹر کی چھٹیوں کے لیے اپنی آکسفورڈ یونیورسٹی ہاسٹل کے کمرے میں سے ضروری سامان چند ہفتوں کے لیے پیک کیا تھا مگر وہ اْس وقت سے لے کر ابھی تک اپنے گھر میں ہیں۔ملالہ یوسفزئی نے کہا ہے کہ انہوں نے اپنے فائنل سمسٹر کی کلاسز بھی زوم ایپلیکیشن کے ذریعے گھر بیٹھے ہی لیں اور اپنے کمرے میں بیٹھ کر فائنل امتحان دیا، انہوں نے رواں سال جون کے مہینے میں اپنا گریجویشن مکمل کیا، وہ اپنے فائنل سمسٹر کے دوران اپنی یونیورسٹی صرف دو گھنٹے کیلئے گئیں وہ بھی اپنے ہاسٹل کے کمرے سے اپنی بقیہ سامان وغیرہ لینے۔ملالہ کا کہنا تھا کہ  انہوں نے دیکھا کہ یونیورسٹی کے باغیچوں میں گھاس بہت بڑا ہو چکا تھا اور بینچز خالی تھے، اْنہیں کہیں بھی کوئی نظر نہیں آیا۔انہوں نے کہا کہ 2020 میں گریجویٹ کرنے والے دوسرے طالبوں علموں کی طرح انہوں نے نی بھی اپنے گریجویشن کا اختتام ایسا نہیں سوچا تھا۔ملالہ کا کہنا تھا کہ تعلیمی سال کے آغاز میں انہوں نے سوچا تھا کہ وہ اپنی یونیورسٹی کی ایک ایک گلی سے گزریں گی، ہر گارڈن میں تصویریں بنائیں گ گی اور ہر کیفے کی چائے پئیں گی اور ہر ڈائننگ حال میں بیٹھ کر کھانا کھائیں گی۔

 ملالہ 

مزید :

صفحہ اول -