میڈیا کا گلادبانے کے حکومتی اقدامات قابل مذمت، پیپلزپارٹی 

   میڈیا کا گلادبانے کے حکومتی اقدامات قابل مذمت، پیپلزپارٹی 

  

اسلام آباد (آن لائن) پاکستان پیپلزپارٹی نے کہا ہے کہ جب سے یہ حکومت  آئی ہے میڈیا کا گلا دبایا جارہا ہے، ہم ایسے تمام اقدامات کی مذمت کرتے ہیں  آج اپوزیشن مسائل کو اجاگر کرتی ہے تو نیب اپوزیشن کو بلیک میل کرنا شروع کردیتی ہے  ہیومن رائٹ واچ رپورٹ میں  آصف زرداری، میر شکیل الرحمن پر ہونے والے مظالم کا ذکر ہے،  پیپلزپارٹی کے رہنما سینیٹر مصطفی نواز کھوکھر نے دیگر رہنماؤں کے ہمراہ پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہا کہ خبر ملی ہے کہ صحافی اعجاز عباسی پر پی آئی ڈی میں بند کر کے تشدد کیا گیا ہے جب سے یہ حکومت آئی ہے میڈیا کا گلا دبایا جا رہا ہے ہم ایسے تمام اقدامات کی مذمت کرتے ہیں آج اپوزیشن مسائل کو اجاگر کرتی ہے تو نیب اپوزیشن کو بلیک میل کرتا ہے ہیومن رایٹ واچ نے اپنی رپورٹ میں آصف علی زرداری، میر شکیل الرحمن پر ہونے والے مظالم کا ذکر کیا وائس چانسلر ڈاکٹر مجاہد کامران نے نیب کو ایکسپوز کیا تھا اس سے پہلے یورپی کمیشن نے کہا تھا کہ پاکستان میں نیب سیاسی بلیک میلنگ کے لئے استعمال ہونے والا ادارہ بنتا جا رہا ہے سپریم کورٹ میں انکشاف ہوا کہ نیب پراسیکیوشن کیلئے رکھے گئے افسران کا ایسا کوئی تجربہ نہیں ہے ہم سفارتخانوں کو نیب کے مظالم کے حوالے سے خطوط لکھیں گے ہم نیب کو مکمل طور پر ایکسپوز کریں گے ہمیں نیب کے قوانین میں ترامیم بھی کرنی چاہیے ایف اے ٹی ایف کے حوالے سے بہت سے قوانین بنانے کی ضروری تھی ہم نے ایف اے ٹی ایف قانون سازی کیلئے حکومت کا نہیں پاکستان کو مد نظر رکھ کر کیا  انہوں نے کہا کہ  30 اگست تک ایف اے ٹی ایف کے حوالے سے پاکستان کو قانون سازی ہر حالت کرنا تھی۔ 

پی پی رہنما 

مزید :

صفحہ آخر -