بھلوال میں انڈسٹریل سٹیٹ کے قیام کے عمل کو تیز کیا جائے

بھلوال میں انڈسٹریل سٹیٹ کے قیام کے عمل کو تیز کیا جائے

  

اسلام آباد (اے پی پی)ہارویسٹ ٹریڈنگ کے ڈائریکٹر احمد جواد نے پنجاب انڈسٹریل اسٹیٹ ڈویلپمنٹ اینڈ منیجمنٹ کمپنی (پی آئی ای) سے مطالبہ کیا ہے کہ تحصیل بھلوال میں انڈسٹریل سٹیٹ کے قیام کے عمل کو تیز کیا جائے ۔ انہوں نے کہا کہ بھلوال میں انڈسٹریل اسٹیٹ کے قیام کا مطالبہ گزشتہ کئی سالوں سے کیا جا رہا ہے ۔ اتوار کو اے پی پی کے ساتھ خصوصی گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ منصوبہ کی تکمیل سے کینو پیدا کرنے والی دو بڑی تحصیلوں کوٹ مومن اور بھلوال سے کینو کی برآمدات میں نمایاں اضافہ ہوگا۔ انہوں نے بتایا کہ یہاں سے پورے ملک کی کینو کی مجموعی برآمدات کا 50فیصد حصہ برآمد کیا جاتا ہے ۔ احمد جواد نے افسوس کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ پاکستان کینو پیدا کرنے والا 13واں بڑا ملک ہے جہاں سالانہ 20لاکھ ٹن کینو پیدا ہوتا ہے تاہم یہاں سے بہت کم برآمدات کی جاتی ہیں۔ ایک سوال کے جواب پر احمد جواد نے بتایا کہ ہم برآمدات میں خاطر خواہ اضافہ کر سکتے ہیں اور اگر کینو کے برآمد کنندگان کو بہترین معیار کے صنعتی زونز فراہم کئے جائیں تو اس برآمدات کے عمل کو تیز تر اور آسان بنایا جا سکے گا۔ انہوں نے کہا کہ بھلوال میں صنعتی زون کے قیام کا مطالبہ یہاں کے کاروباری طبقات کا پرانا مطالبہ ہے اور پی آئی ای کو چاہئے کہ صنعتی زون کے قیام کے عمل میں تیزی لائے ۔

 احمد جواد نے کہا کہ زون میں 200سے زائد ویکس پلانٹ لگائے جائینگے جہاں سے نئی برآمدی منڈیوں تک رسائی حاصل کی جائے گی۔ انہوں نے کہا کہ پراسیسنگ اور ہارویسٹنگ کی ناکافی سہولتوں کی وجہ سے دوران برداشت ہماری مجموعی پیداوار کا 20فیصد حصہ جبکہ پراسیسنگ کے عمل میں 10فیصد حصہ ضائع ہو جاتا ہے ۔ احمد جواد نے ایک سوال کے جواب میں کہا کہ ملک سے 300ملین ڈالر مالیت کا کینو برآمد کیا جا رہا ہے جو ہماری پیداوار کے مقابلہ میں کم ہے اور نئے صنعتی زونز کے قیام سے ملکی برآمدات کو نمایاں فروغ حاصل ہوگا جس سے قیمتی زرمبادلہ کما کر ملکی معیشت کے استحکام میں مدد حاصل کی جا سکتی ہے ۔

مزید :

کامرس -