مولانافضل الرحمان پر حملے کی کوشش، تحریک انصاف کے کارکنان زخمی

مولانافضل الرحمان پر حملے کی کوشش، تحریک انصاف کے کارکنان زخمی
مولانافضل الرحمان پر حملے کی کوشش، تحریک انصاف کے کارکنان زخمی

  

لندن،اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک) جمعیت علمائے اسلام ف کے سربراہ مولانا فضل الرحمان پر پاکستان تحریک انصاف کے کارکنوں نے حملے کی کوشش کی جس پر دونوں جماعتوں کے کارکنان میں ہاتھاپائی بھی ہوئی ۔

مقامی میڈیا کے مطابق مولانا فضل الرحمان لندن میں ساو¿تھ ہال کی مسجد ابوبکر میں مولانا خالد محمود سومرو کی یاد میں منعقد تعزیتی ریفرنس میں شرکت کے لئے جا رہے تھے کہ پی ٹی آئی کے کارکنوں نے ’گوڈیزل گو‘ کے نعرے لگانا شروع کر دیئے، کچھ کارکن مولانا فضل الرحمان پر حملے کے لئے آگے بڑھے تو جے یو آئی (ف) کے کارکنوں سے ہاتھا پائی ہو گئی اور کارکن اپنے قائد کو بحفاظت نکال کر لے جانے میں کامیاب ہو گئے۔

نجی ٹی وی چینل کے ذرائع کے مطابق افغان شہری بھی سڑک پر آگئے اور اُنہوں نے مولانا فضل الرحمان کی گاڑی کو گھیرے میں لے لیا،مخالفانہ نعروں پر مشتمل بینرزاُٹھارکھے تھے ، اِسی دوران پولیس موقع پر پہنچی اور مولانا فضل الرحمان کی گاڑی کو حفاظتی حصار میں وہاں سے لے گئے ۔

 دوسری جانب ترجمان تحریک انصاف لندن کا کہنا ہے کہ ہم صرف احتجاج کرنے کے لئے گئے تھے، کارکنوں نے کوئی حملہ نہیں کیا بلکہ جے یو آئی ف کے افراد نے حملہ کر کے زخمی کیا، ان کے خلاف مقدمہ درج کرا سکتے ہیں۔

مزید :

اسلام آباد -