داعش سربراہ کے نمائندے کے پاکستان پہنچنے کا انکشاف

داعش سربراہ کے نمائندے کے پاکستان پہنچنے کا انکشاف
داعش سربراہ کے نمائندے کے پاکستان پہنچنے کا انکشاف

  


راولپنڈی (ویب ڈیسک) انٹیلی جنس اداروں نے داعش کے امیر کے نمائندے سمیت 2 دیگر غیر ملکیوں کی پاکستان میں موجودگی اور کالعدم تنظیموں کو ساتھ ملا کر سرگرمیاں کرنے کا انکشاف کیا ہے۔ ذرائع کے مطابق سکیورٹی سے متعلق اداروں، پنجاب حکومت اور سینئر پولیس حکام کو آگاہ کیا ہے کہ داعش کے امیر ابوبکر البغدادی نے مڈل ایسٹ سے تعلق رکھنے والے زبیر الکویتی کو ہدایات جاری کی ہیں کہ پاکستان میں کالعدم تنظیموں اور ان سے وابستہ عناصر کو ساتھ ملائے اور انہیں ہر طرح کی مالی لاجسٹک سپورٹ فراہم کی جائے۔ رپورٹ کے مطابق ایسی اطلاعات ہیںکہ داعش کے امیر کی جانب سے ذمہ داریاں ملنے کے بعد زبیر الکویتی 2 مزیدغیر ملکیوں کے ساتھ پاکستان پہنچ چکا ہے اور انہیں جند اللہ سے وابستہ عناصر سہولیات فراہم کر رہے ہیں۔ اطلاعات ہیں کہ داعش سے تعلق رکھنے والے مذکورہ عناصر لاہور، ملتان اور رحیم یار خان کے درمیان کسی جگہ پر مصروف ہیں اور اپنی مصروفیات ختم ہونے کے بعد کراچی روانہ ہو جائیں گے۔ جند اللہ سمیت پنجابی دہشت گرد گروپوں سے وابستہ عناصر نے ابوبکر البغدادی کے پیغام کو پھیلانے کے لئے پمفلٹ اور کتابچہ چھپوایا ہے اور یہی عناصر ملک کے مختلف حصوں میںوال چاکنگ میں مصروف ہیں۔رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ لاہور سے ملنے والی کتاب انہی سرگرمیوں کا حصہ ہو سکتی ہے۔ ایڈیشنل آئی جی راولپنڈی اختر عمر حیات لالیکا نے بھی سی پی او راولپنڈی کو ہدایات پر سختی سے عملدرآمد کی ہدایت کی ہے ”ایکسپریس“ نے اختر عمر حیات لالیکا کا موقف جاننے کیلئے ان سے رابطہ کیا تاہم فون اٹینڈ نہ ہو سکا۔

تحریک انصاف کے کارکن کو قتل کرنے والے ملزم کی گرفتاری کیلئے ٹیم تشکیل

مزید : راولپنڈی


loading...