”میوزک چھوڑ نے کے بعد بھی مجھے یہ گانا یاد آتا تھا، میں نے ایک دن اپنے استاد طارق جمیل صاحب سے کہا کہ۔۔۔“ جنید جمشید کی وہ ویڈیو جسے دیکھ کر آپ کی آنکھوں میں آنسو آجائیں گے

”میوزک چھوڑ نے کے بعد بھی مجھے یہ گانا یاد آتا تھا، میں نے ایک دن اپنے استاد ...
”میوزک چھوڑ نے کے بعد بھی مجھے یہ گانا یاد آتا تھا، میں نے ایک دن اپنے استاد طارق جمیل صاحب سے کہا کہ۔۔۔“ جنید جمشید کی وہ ویڈیو جسے دیکھ کر آپ کی آنکھوں میں آنسو آجائیں گے

  

کراچی (ڈیلی پاکستان آن لائن) پی آئی اے کے بدقسمت طیارے پی کے 661 میں دیگر مسافروں کے ہمراہ جنید جمشید بھی شہادت کے اعلیٰ مرتبے پر فائز ہوچکے ہیں اور اب ان کی صرف یادیں ہی دلوں میں باقی رہ گئی ہیں۔ ایسی ہی ایک یاد ہم بھی تازہ کرتے ہیں اور آپ کو بتاتے ہیں کہ جنید جمشید نے اپنی زندگی میں ایک نجی محفل کے دوران ایک واقعہ سنایا جس میں ایک گانے کے بارے میں بتایا کہ یہ میری سابقہ اور حالیہ دونوں زندگیوں کو بیان کرتا ہے ۔

وزیراعظم نے حسب روایت طیارہ حادثے کی فوری شفاف اور تفصیلی تحقیقات کرکے منظر عام پر لانے کا حکم دے دیا

جنید جمشید نے واقعے کی تفصیلات بتاتے ہوئے کہا تھا ’جب میں میوزک میں تھا تو کشور کمار کا ایک گانا صرف اپنے لیے گاتا تھا اور کسی کو نہیں سناتا تھا کیونکہ وہ میری اُس زندگی کو بیان کرتا تھا۔ جب میں نے موسیقی کی دنیا چھوڑ دی تو مجھے لگتا کہ یہ گانا میری اِس والی زندگی کو بھی بیان کرتا ہے۔ایک دن میں نے اپنے استاد مولانا طارق جمیل صاحب سے کہا کہ میں یہ گانا گادوں کیونکہ مجھے لگتا ہے کہ یہ گانا کسی اللہ کے بندے نے لکھا ہے، لیکن مولانا نے کہا کہ نہیں یار تم گانا گاؤ گے تو بہت سے لوگ بہک جائیں گے‘۔

پاکستان کی تاریخ کا شرمناک ترین اشتہار، دیکھ کر ہر پاکستانی کانوں کو ہاتھ لگانے پر مجبور ہوجائے، مذھبی حلقوں کی جانب سے مذمت

انہوں نے حاضرین کو مخاطب کرتے ہوئے کہا ’آج میں یہ چاہتا ہوں کہ میں آپ لوگوں کو وہ دو اشعار ضرور سناؤں کیونکہ وہ اشعار ہم سب کی زندگی کو بیان کرتے ہیں‘۔ جنید جمشید نے حاضرین کو کشور کمار کے گانے ”یہ جیون ہے ، اس جیون کا یہی ہے رنگ و روپ،، تھوڑے غم ہیں، تھوڑی خوشیاں، یہی ہے چھاو¿ں دھوپ“ کے کچھ اشعار سنائے جس کی ویڈیو آپ ذیل میں دیکھ سکتے ہیں۔

واضح رہے کہ اس گانے کی شاعری آنند بخشی نے لکھی جبکہ لکشمی کانت پیارے لال نے اس کی دھن بنائی اور کشور کمار نے فلم ” پیا کا گھر“ کیلئے گایا تھا۔

Junaid Jumshed PK661 by dailypakistan

مزید :

قومی -