دعا منگی کی امریکہ میں کس سے دوستی ہوئی اور وہ اسے دھمکیاں کیوں دیتا تھا ؟ حیرت انگیزانکشاف ہو گیا

دعا منگی کی امریکہ میں کس سے دوستی ہوئی اور وہ اسے دھمکیاں کیوں دیتا تھا ؟ ...
دعا منگی کی امریکہ میں کس سے دوستی ہوئی اور وہ اسے دھمکیاں کیوں دیتا تھا ؟ حیرت انگیزانکشاف ہو گیا

  



کراچی (ڈیلی پاکستان آن لائن )پولیس نے دعویٰ کیاہے کہ 22 سالہ دعا منگی کے اغواءمیں اس آدمی کا ہاتھ ہو سکتا ہے جس سے وہ امریکہ میں تعلیم حاصل کرنے کے دوران ملی تھی اور وہ شخص دعا پر شادی کرنے کیلئے دباﺅ بھی ڈالتا رہا تھا ، پولیس نے دعا منگی کی بازیابی کیلئے جاری تحقیقات کے دوران تقریبا 22 افراد کے بیانات قلمبند کیے اور جب دعا کو اغواءکیا گیا تو اس کی بہن بھی اپنے ایک دوست کے ساتھ اسی چائے کی دکان پر موجود تھی ۔

نجی ویب سائٹ ” دی نیوز “ کی رپورٹ کے مطابق دعا منگی کی بڑی بہن کا کہناتھا کہ وہ بھی اپنے دوست کے ساتھ اس وقت وہیں موجود تھی لیکن جیسے یہ دعا اپنے دوست کے ساتھ پیدل واک کرنے لگی تو اسی وقت ملزمان اسے اغواءکر کے لے گئے ۔تحقیقات کاروں کا کہناہے کہ دعا اور حارث اکثر اوقات وہاں چائے پینے جایا کرتے تھے جبکہ گزشتہ پانچ چھ دنوں سے وہ لگاتار جارہے تھے ۔

انہوں نے کہا کہ دعا قانون کی ڈگری حاصل کر رہی تھی اور وہ عمومی طور پر خود کو ایک امیر ترین خاندان سے بتاتی تھی اور کہتی تھی کہ وہ ڈیفنس میں رہتی ہے حالانکہ وہ کورنگی کراسنگ کے علاقے میں رہتی تھی،سینئر پولیس اہلکار کا کہناتھا کہ ہم تحقیقات کے دوران دعا منگی کے اغواءمیں تاوان کے امکان کو بھی مسترد نہیں کر رہے جیسا کہ دعا خود کو ایک امیر قبیر خاندان کی وارث کے طور پر ظاہر کرتی تھی ۔

پولیس حکام کاکہناتھا کہ دعا منگی کے تمام دوست یہ بات سن کر حیرانگی میں مبتلا ہیں کہ وہ دراصل ڈیفنس میں نہیں بلکہ کورنگی میں رہتی تھی جبکہ اس کا کسی بااثر خاندان سے بھی کوئی تعلق نہیں ہے ۔پولیس افسر کا کہناتھا کہ امریکہ میں پڑھائی کے دوران دعا کی دوستی ایک پاکستانی سے ہوئی جس نے متعد د بار دعا کو شادی کی پیشکش کی اور دباﺅ بھی ڈالا لیکن اس کے انکار کے بعد اس شخص نے دعا کو دھمکی دینا شروع کر دی کہ وہ اس کی تصاویر سوشل میڈیا پر اپ لوڈ کر دے گا اور ویڈیوز ریلیز کر دے گا ۔

مزید : علاقائی /سندھ /کراچی


loading...