بلدیاتی انتخابات، سرکاری و سائل کا استعمال کیا جا رہا ہے: حیدر ہوتی

بلدیاتی انتخابات، سرکاری و سائل کا استعمال کیا جا رہا ہے: حیدر ہوتی

  

       نوشہرہ(بیورورپورٹ)نوشہرہ عوامی نیشنل پارٹی کے مرکزی سینئر نائب صدر امیر حیدر خان ہوتی نے کہاہے کہ اے این پی سب سے پہلے بلدیاتی انتخابات میں سرکاری وسائل کے استعمال کے خلاف آواز اٹھا یا ہے،لیکن پتہ نہیں الیکشن کمیشن ابھی تک کیوں خاموش ہے، ان خیالات کا اظہار انہوں نینوشہرہ کلاں میں اسسٹنٹ کمشنر پایوخان کیوالد کے وفات پر تعزیت کے موقع پر میڈیا سیکفتگو کرتے ہوئے کیا، اس موقع پر عوامی نیشنل پارٹی کے مرکزی جنرل سیکرٹری میاں افتخار حسین،ضلعی صدر سیکرٹری جمال خان اور ضلعی جنرل سیکرٹری حامد خان اور دیگر بھی موجود تھے،امیر حیدر خان ہوتی نے کہا کہ نوشہرہ سمیت خیبر پختون خوا ان اضلاع جہاں پر بلدیاتی الیکشن ہورہے ہیں وہاں پر حکومتی وزرا اورمشیروں کی جانب سے سرکاری وسائل کا بے دریغ استعمال کیا جارہا ہے جبکہ الیکشن کمیشن نے چھپ سادھ لی ہیں انہوں نے کہا کہ سب سے پہلے عوامی نیشنل پارٹی نے بلدیاتی الیکشن کے دوران سرکاری وسائل کے استعمال کرنے اور ترقیاتی کام جاری رکھنے پر آواز اٹھایا ہے، امیر حیدر خان ہوتی کا کہنا تھا نوشہرہ میں حکومتی وزرا نے پورا زور لگایا ہوا ہے اور الیکشن کمیشن کے احکامات کے باوجود وزیر دفاع پرویز خٹک،ایم این اے ڈاکٹر عمران خٹک، ایم پی اے ابراہیم خٹک کی جانب سے الیکشن کمپیئین کا کا سلسلہ جاری ہیں، ان کا کہنا تھا کہ دھاندلی کی شروعات جاری ہیں کسی کو نوکری کا جھانسہ دیا جارہا ہے تو کسی کو پروموشن کی تو کسی کو نوکری سے نوکریوں سے نکالنے کی دھمکیاں دی جارہی ہیں، انہوں نے کہا نوشہرہ میں سرکاری وسائل کا استعمال کیا جارہا ہے اور جگہ جگہ پر بجلی کے کھمبے پہنچائے جارہے ہیں، سوئی گیس کے پائپ لائن بچھائے جارہے ہیں عوام کی آنکھوں میں دھول پھونکنے کا سلسلہ جاری ہیں اور اسی وجہ سے سادہ لوح عوام کو گمراہ کرکے ان سے ووٹ لیا جارہا ہے جبکہ الیکشن کے بعد یہ سارے لوگ انہی عوام سے غائب ہوجائے گے جو پھر اگلے الیکشن میں اسی جھوٹے وعدوں اوردعوں کے ساتھ ایک مرتبہ سامنے آجائے گے، انہوں نے کہا کہ موجودہ حکومت خود دھاندلی کی پیداوار حکومت ہے اور اسی وجہ سے الیکشن جیتنے کے لیے کسی بھی طرح کی ددھاندلی کرسکتے ہیں۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -