وکیل کی سکت نہ رکھنے والوں کو قانونی معاونت فراہمی کا مطالبہ 

  وکیل کی سکت نہ رکھنے والوں کو قانونی معاونت فراہمی کا مطالبہ 

  

پشاور(سٹی رپورٹر)پاکستان تحریک استقلال کے سابق صوبائی چیئرمین وسابق ڈسٹرکٹ ممبرپشاورحمیداکبرخان آفریدی نے کہاہے کہ خیبرپختونخواکی جیلوں میں معمولی نوعیت کے مقدمات میں قیدافرادمحض اس وجہ سے رہائی سے محروم ہیں کہ وہ اپنے کیلئے وکیل نہیں کرسکتے ہیں،ان حالات میں حکومت وقت کی ذمہ داری بنتی ہے کہ وہ ایسے افرادکوقانونی معاونت فراہم کرے،ان خیالات کااظہارانہوں نے گزشتہ روزیاسین آبادمیں واقع اپنی رہائشگاہ پرمنعقدہ اجلاس کے دوران کیا،جس میں معروف نوجوان سیاسی شخصیت احسن اکبرآفریدی،ممتازسماجی شخصیت الحاج نائب خان بنگش سمیت دیگرنے کثیرتعدادمیں شرکت کی،حمیداکبرخان نے مزیدکہاکہ انصاف کی فراہمی میں پاکستان کی عالمی سطح پردرجہ بندی انتہائی افسوسناک ہے اورملک بھرسمیت خیبرپختونخواکی جیلوں میں قیدافرادکی رہائی میں حائل رکاوٹیں اس بات کی دلیل ہیں کہ وطن عزیز میں انصاف کی فراہمی میں بہتری کیلئے فوری اقدامات ناگزیر ہیں،انہوں نے حکومت سے مطالبہ کیاکہ صوبے کی جیلوں میں وکیل کی سکت نہ رکھنے والے قیدیوں کوقانونی معاونت فراہمی کیلئے ہنگامی بنیادوں پراقدامات اٹھائے جائیں۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -