سانحہ سیالکوٹ، سری لنکن شہری کی جان دراصل ملک عدنان کیوں بچانا چاہتے تھے؟ وزیراعظم ہائوس میں کھڑے ہوکر بتادیا

سانحہ سیالکوٹ، سری لنکن شہری کی جان دراصل ملک عدنان کیوں بچانا چاہتے تھے؟ ...
سانحہ سیالکوٹ، سری لنکن شہری کی جان دراصل ملک عدنان کیوں بچانا چاہتے تھے؟ وزیراعظم ہائوس میں کھڑے ہوکر بتادیا

  

 اسلام آباد (ویب ڈیسک) سیالکوٹ میں ہجوم کے ہاتھوں قتل ہونے والے سری لنکن شہری پریا نتھا دیاودھنہ کی جان بچانے کی کوشش کرنے والے ملک عدنان نے کہا کہ اس دن میرا جذبہ یہی تھا کہ کسی طرح سری لنکن شہری کو بچا لوں، چاہتا تھا کہ کوئی ایسا واقعہ نہ پیش آ جائے کہ ملک کا نام خراب ہو۔

وزیر اعظم آفس میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے  ان کاکہنا تھاکہ   شاید یہ قتل قوم کے لیے ایک ٹرننگ پوائنٹ ہو، یہ واقعہ  پورے پاکستان کی سوچ کو بدل دے گا، سوچ بدلے گی تو آنے والی نسل کی بہتر پرورش ہو گی۔

خیال رہے کہ سیالکوٹ میں بحیثیت فیکٹری مینجر ملازمت کرنے والے سری لنکن شہری پریا نتھا دیاودھنہ کو توہین مذہب کے الزام میں مشتعل افراد نے تشدد کر کے ہلاک کر دیا تھا لیکن اس دوران ملک عدنان نے پریا نتھا کو مشتعل افراد کے تشدد سے بچانے کی بھرپور کوشش کرتے رہے اور خود ڈھال بنے رہے، ملک عدنان کی اس کوشش پر وزیر اعظم عمران خان نے انہیں تمغہ شجاعت دینے کا اعلان کیا ہے۔

مزید :

قومی -