پختون بزنس اینڈ ویلفیئر آرگنائزیشن نے امارات کا قومی دن دبئی میں منایا

پختون بزنس اینڈ ویلفیئر آرگنائزیشن نے امارات کا قومی دن دبئی میں منایا
پختون بزنس اینڈ ویلفیئر آرگنائزیشن نے امارات کا قومی دن دبئی میں منایا

  

دبئی (طاہر منیر طاہر) متحدہ عرب امارات کی گولڈن جوبلی منانے کی تقریبات کا سلسلہ جاری ہے۔ ایک سرکاری اعلامیہ کے مطابق گولڈن جوبلی کی یہ تقریبات سارا سال جاری رہیں گی۔ امارات میں مقیم پاکستان کمیونٹی نے بھی اماراتیوں کے ساتھ اپنے خلوص کا اظہار کرنے کے لیے متعدد تقریبات کی ہیں جبکہ مزید تقریبات کا سلسلہ تاحال جاری ہے۔ اماراتیوں کے ساتھ اظہار یکجہتی اور ان کی خوشیوں میں شریک ہونے کے لیے پختون بزنس اینڈ ویلفیئر آرگنائزیشن (PBW) نے بھی دبئی کے ایک ہوٹل میں امارات کی گولڈن جوبلی کی تقریب کا انعقاد کیا جس میں قونصلیٹ جنرل آف پاکستان دبئی کے قونصل جنرل حسن افضال خان اور خیبرپختونخوا عوامی نیشنل پارٹی کے صوبائی صدر ایمل ولی خان مہمانان خصوصی تھے۔ پی بی ڈبلیو کے صدر انجینئر زبیر خان اور جنرل سیکرٹری خلیل الرحمن بونیری اور ان کے ساتھیوں نے تقریب میں آنے والے مہمانوں کا پھولوں سے استقبال کیا۔ سٹیج سیکرٹری کے فرائض نظار خان نے انجام دیے جبکہ زبیر خان اور سلیمان وصال نے پی بی ڈبلیو کی کارکردگی اور اس کے اغراض و مقاصد بیان کیے۔

تقریب ہذا میں عبداللہ خان، زمرد بونیری، چودھری خالد حسین، ملک شہزاد، محمد غوث قادری، خواجہ عبدالوحید پال، عبدالمجید مغل، ارسلان، سلیم سلطان، حاجی غریب گل، سلمان خان، میاں اویس انجم، میاں منیر ہانس، نواز خان جدون، حاجی جمیل اسحق، جمیل عبداللہ، تیمور خان، وقار احمد خان،عرفان افسر اعوان، زہرہ شبنم، یاسمین کنول، کامران احمد ریاض، مخدوم رئیس قریشی، محمد علی ایڈووکیٹ، جمیل بنگیال، امجد خان، سید آصف زمان، شوکت محمود بٹ، مقبول انجم، زاہد خان، اور پختون شاعر خالد محمود کے علاوہ بہت سے لوگوں نے شرکت کی۔

اس موقع پر پاکستانی صحافی خاتون سعدیہ عباسی کو یو اے ای کا قومی ترانہ اردو زبان میں پیش کرنے پر خراج تحسین پیش کیا گیا اور انہیں پی بی ڈبلیو کی طرف سے اعزازی شیلڈ بھی دی گئی۔ تقریب میں مقررین نے امارات کے پچاسویں نیشنل ڈے پر یو اے ای کے حکمرانوں اور عوام الناس کو مبارکباد دی۔

مقررین نے کہا کہ دو دسمبر 1971ءمیں قائم ہونے والا ملک دو دسمبر 2021ءمیں اپنے پچاس سال پورے کرچکا ہے۔ اسی طرح پاکستان اور متحدہ عرب امارات کی دوستی کو بھی پچاس سال پورے ہوگئے ہیں۔ جس پر ہمیں فخر ہے اور دعا کرتے ہیں کہ مستقبل میں پاکستان اور امارات کے تعلقات مزید مضبوط ہوں۔

مزید :

تارکین پاکستان -